مظفر گڑھ میں ماں اور بیٹی کے ساتھ 10افراد کی اجتماعی زیادتی ،مقدمہ درج

مظفر گڑھ میں ماں اور بیٹی کے ساتھ 10افراد کی اجتماعی زیادتی ،مقدمہ درج
مظفر گڑھ میں ماں اور بیٹی کے ساتھ 10افراد کی اجتماعی زیادتی ،مقدمہ درج

  

مظفرگڑھ (ڈیلی پاکستان آن لائن) مظفرگڑھ میں شاہ جمال کے علاقے میں دس افراد نے ماں بیٹی کو مبینہ طور پر رات بھر ان کے والدین کے سامنے زیادتی کا نشانہ بنایا اور فرارہوگئے،پولیس نے واقعہ کا مقدمہ درج کرکے کارروائی کاآغاز کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق مظفرگڑھ کی رہائشی شہناز بی بی نے الزام لگایا ہے کہ خضر،عامر ،آصف،کامران بلال،اور عمران سمیت دس افراد نے اسلحہ کے زور پر ان کے بزرگ والدین کے سامنے ان سے اور ان کی بیٹی کے ساتھ اجتماعی زیادتی کی تھی۔ان کا کہنا تھا کہ ملزمان نے مزاحمت پر تشدد کا نشانہ بھی بنایا اور ہمارے گھر سے نقدی اور زیوارات بھی لے گئے۔

مظفر گڑھ کے نواحی علاقے کی رہائشی خاتون کے مطابق اس کا شوہرڈیرہ غازی خان میں کام کرتا ہے جس کی وجہ سے وہ اپنے والدین کے ساتھ رہائش پذیرہے۔

پولیس تھانہ شاہ جمال نے مدعیہ کی درخواست پر مقدمہ درج کرتے ہوئے ملزمان کی گرفتاری کے لیے کارروائی کا آغاز کردیا ہے۔پولیس ترجمان کے مطابق ملزمان شہناز بی بی کے قریبی رشتہ دار ہیں اور پولیس ملزمان کی گرفتاری کے لئے چھاپے ماررہی ہے تاہم اب تک ملزمان پولیس کی گرفت میں نہیں آسکے ہیں۔ڈی پی او مظفرگڑھ اویس ملک کا کہنا ہے کہ بہت جلد ملزمان پولیس کی گرفت میں ہونگے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /مظفرگڑھ