رحیم یار خان‘ بغیر نقشہ منظوری اور کمرشلائزیشن فیس ادا نہ کرنے پر 10سے زائد دکانیں سیل

رحیم یار خان‘ بغیر نقشہ منظوری اور کمرشلائزیشن فیس ادا نہ کرنے پر 10سے زائد ...

  



رحیم یارخان(بیورو رپورٹ)بغیر نقشہ منظور و کمرشلائز فیس ادا کیے بغیر چلنے والے کاروباری مراکز کے خلاف تحصیل کونسل کے(بقیہ نمبر22صفحہ12پر)

آفیسران کا ایکشن چک 110/ون ایل اڈا پر دس سے زائد دوکانیں سیل،مزید کاروائی جاری،تفصیل کے مطابق شہری کی درخواست پرسرکاری خزانہ کو نقصان پہنچانے والے بااثر زمیندار کے خلاف تحصیل کونسل کے افیسران کا ایکشن،غیر قانونی طریقہ سے تعمیرکر کے درجنوں دوکانیں چلانے پر سیل،بلڈنگ انسپکٹر کی جانب سے معتدد بار نوٹس دینے کے باوجود بھی نقشہ و کمرشلائز فیسیں ادا نہ کی گئی، ایک ماہ کا عرصہ گزرنے کے بعد بلڈنگ انسپکٹر نے آفیسران بالا کی ہدایت پر قانونی کارروائی کرتے ہوئے چک 110 ون ایل کے بااثر زمینداروں کی دس سے زائد دوکانیں سیل کر دی،زمینداد اصغر مہر چک 110 ون ایل اڈا پر بغیر نقشہ منظور اور کمرشلائز فیس ادا کیے بغیرعرصہ دراز سے غیر قانونی طور مارکیٹ چلا رہاتھا، واضح رہے کہ شہری نے سیٹزن پورٹل پر شکائیت کرنے کے ساتھ میونسپل آفیسر پلاننگ کو شکایت کی تھی،اس موقع پر بلڈنگ انسپکٹر ذوہیب خان نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ عرصہ دراز سے نقشہ پاس کروائے اور سرکاری فیسیں جمع کروائے بغیر دوکانیں چل رہی تھی، بار بار نوٹس دینے کے بعد بھی سرکاری خزانہ میں نا تو فیس جمع کروائی گئی اور نا ہی نقشہ پاس کروایا گیا جس پر کاروائی کی گئی ہے،انہوں نے کہ کسی بھی شخص کو سرکاری خزانہ کو نقصان پہنچانے کی ہر گز اجازت نہیں دی جائے گی،بغیر نقشہ پاس کروائے چلنے والے تمام کاروباری مراکز کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جائے،انہوں نے اپنے پیغام میں کہا کہ غیر قانونی طریقہ سے کام کرنے والے افراد فوری اپنا قبلہ درست کر لیں ورنہ قانون کی گرفت سے نہیں بچ سکیں گے۔

دکانیں سیل

مزید : ملتان صفحہ آخر