سمن آباد اور عزیز بھٹی ٹاؤن میں غیر قانونی پلازے، اینٹی کرپشن کاسخت نوٹس

  سمن آباد اور عزیز بھٹی ٹاؤن میں غیر قانونی پلازے، اینٹی کرپشن کاسخت نوٹس

  



لاہور)اپنے نمائندے سے)ضلعی انتظامیہ کے شعبہ عزیز بھٹی ٹاؤن میں بلڈنگ بائی لاز کی خلاف ورزی معمول بن کر رہ گئی۔ ڈائریکٹر اینٹی کرپشن لاہور ریجن نے ٹاؤن انتظامیہ کو غیر قانونی طور پر تعمیر کئے جانے والے پلازہ کا ریکارڈ لیکر پیش ہونے کی ہدایت کر دی۔ حکومتی خزانے کو نقصان پہنچانے میں ملوث سرکاری و غیرسرکاری افراد کے خلاف سخت قانونی کارروائی کرنے کا عندیہ دیدیا۔ روزنامہ پاکستان کو ملنے والی معلومات کے مطابق عزیز بھٹی ٹاؤن میں ہنگامی بنیادوں پر تعمیر ہونے والے غیر قانونی پلازے کے حوالے سے تحقیقات شروع کردی گئی ہیں۔ عزیز بھٹی ٹاؤن کے بلڈنگ انسپکٹر طاہر حفیظ، ایم پی او عزیز بھٹی ٹاؤن، ٹھیکیدار ملک آصف اور پلازہ کے مالک محمد گلزار کوبھی طلب کیا گیا ہے۔عزیز بھٹی ٹاؤن کے علاقہ اتفاق چوک، سنی ٹاؤن، پیپسی روڈ پربننے والا یہ پلازہ لاقانونیت کی بڑی مثال بن چکا ہے۔ جوڑے پل کے رہائشی سائل کاشف علی کی نشاندہی پرٹاؤن انتظامیہ سے ریکارڈ طلب کیا گیا۔ اینٹی کرپشن ذرائع نے مزید آگاہی دی کہ بلڈنگ انسپکٹر طاہر حفیظ کی جانب سے ایک غلط بیانی پر مشتمل بیان بھی دیا گیاہے جو کہ ایل ڈی اے کی رپورٹ آنے کے بعد کنفرم ہوچکا ہے کہ یہ حدود ایل ڈی اے میں نہیں بلکہ ٹاؤن انتظامیہ میں آتی ہے تاہم اسسٹنٹ ڈائریکٹر سیٹلمنٹ اور انکوائری آفیسر عباس عامر کا کہناتھا کہ مکمل انکوائری کے بعد قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے۔دریں اثناء بلدیہ عظمی کے سمن آباد ٹاؤن کے شعبہ ٹاؤن پلاننگ کی حدود میں غیر قانونی پلازہ کی تعمیر بلڈنگ بائی لاز کا منہ چڑانے لگی، محکمہ اینٹی کرپشن نے نوٹس لیتے ہوئے ذمہ داران کو ریکارڈ سمیت طلب کر لیا ڈائریکٹر اینٹی کرپشن کو دی گئی درخواست میں میاں شاہد نامی سائل نے موقف اختیار کیا گیا ہے کہ سمن آباد ٹاؤن میں بغیر منظوری کے تعمیرات ہو رہی ہیں، سرکاری اہلکار بھی کسی قسم کی کارروائی کرنے سے گریزاں ہیں، پونچھ روڈ واپڈا کے دفتر کے مقابل بغیر منظوری کے چار کنال کے پلازے کی تعمیر سرکاری اہلکاروں کی کرپشن کا منہ بولتا ثبوت ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1