لیجنڈری اداکار لالہ سدھیر کی 98ویں سالگرہ 25جنوری کو منائی جائے گی

لیجنڈری اداکار لالہ سدھیر کی 98ویں سالگرہ 25جنوری کو منائی جائے گی

  



عبدالحکیم(نامہ نگار)پاکستان فلم انڈسٹری کے پہلے ایکشن ہیرو کے نام سے پہچان بنانے والے شاہ زمان خان المعروف لالہ سدھیر زندہ دلوں کے شہر لاہور میں 25جنوری 1922کو پیدا ہوئے قیام پاکستان کے بعد لالہ سدھیر کی پہلی فلم ہچکولے(بقیہ نمبر50صفحہ7پر)

تھی اس کے بعد ان کی فلم دوپٹہ مقبول ہوئی جس میں وہ ملکا ترنم نور جہاں اور اجے کمار کے مقابل جلوہ گر ہوئے 1956میں فلم ماہی منڈا اور یکے والی نے سدھیر کو بام عروج پر پہنچا دیا جس کے بعد فلم ڈاچی، سلطانہ ڈاکو، نظام لوہار، ٹھاہ اور ان داتا سمیت 200سے زائد اردو اور پنجابی فلموں میں کام کیا اپنے مختلف کردار ادا کرتے ہوئے اس وقت کی معروف ہیروئینوں کے ساتھ کام کیا جن میں مسرت نذیر صبیحہ خانم نور جہاں آ شا بھوسلے، لیلی، راگنی، یاسمین، زیبا، ریحانہ، دیبا، شمیم آ را، نئیر سلطانہ، حسنہ، نیلو، فردوس، نغمہ، سلونی، شیریں، بہار بیگم، رانی، کا نام شامل ہے جبکہ معروف ہیروز میں اداکار حبیب، یوسف خان،منورظریف، سلطان راہی اسد بخاری، سمیت دیگر اداکاروں کے نام شامل ہیں 1970 میں پنجابی فلم ماں پتر، اور 1974 میں ایک اور پنجابی فلم لاٹری میں بہترین اداکاری پر نگار ایوارڈ دیا گیا انہوں نے 40 سال اپنی اداکاری کے جوہر دکھائے لالہ سدھیر 19 جنوری 1997 میں اس جہاں فانی سے رخصت ہو گئے

لالہ سدھیر

مزید : ملتان صفحہ آخر