ٹرانسپیرنسی انٹر نیشنل کی رپورٹ حکمرانوں کے منہ پر طمانچہ،؟حکومت کیخلاف چارج شیٹ، اپوزیشن

ٹرانسپیرنسی انٹر نیشنل کی رپورٹ حکمرانوں کے منہ پر طمانچہ،؟حکومت کیخلاف ...

  



اسلام آباد (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں)پوزیشن جماعتوں نے گورننس اور کرپشن کے معاملات پر بین الاقوامی تنظیم ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل کی رپورٹ کو حکومت کے منہ پر طمانچہ قرار دے دیا۔۔کرپشن میں اضافے کی رپورٹ سامنے آنے کے بعد پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کو اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے سخت تنقید کا سامنا ہے۔مسلم لیگ ن کے صدر اور قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر میاں محمد شہباز شریف کا کہنا ہے کہ پاکستان میں کرپشن بڑھ گئی ہے۔ یہ ناکام ترین حکومت اور عمران خان ناکام ترین وزیر اعظم ہیں۔لندن میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل کے مطابق پاکستان میں کرپشن بڑھ گئی، نواز شریف کے دور میں حالات بہتری کی جانب گامزن تھے۔لیگی صدر کا کہنا تھا کہ سابق وزیراعظم کی حکومت شفافیت کے حوالے سے بہتر تھی، اربوں کھربوں منصوبے لگنے کے باوجود کرپشن کم تھی۔ چور چور کا شور مچانے والے اب کیا جواب دیں گے۔شہباز شریف کا کہنا تھا کہ آج ہر محاذ پر ناکام ہونے کے بعد روٹی کا نوالہ چھین لیا گیا، آٹے بحران کے ذمہ داروں کا پتہ لگایا جائے، ہمارے دور میں آٹے کے کثیر ذخیرے ہوتے تھے۔ان کا کہنا تھا کہ پاکستان تحریک انصاف کی موجودہ حکومت ناکام ترین حکومت اور وزیراعظم عمران خان ناکام ترین وزیر اعظم ہیں، جتنی جلدی ان سے جان چھڑائیں گے پاکستان کے لیے اتنا ہی بہتر ہو گا۔ترجمان پاکستان مسلم لیگ (ن) مریم اورنگزیب کا کہنا ہے کہ ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل کی رپورٹ حکومت کے منہ پر طمانچہ ہے، جھوٹے دعووں سے ملک نہیں چلتے،اچھی گورننس سے چلتے ہیں۔مریم اورنگزیب کا مزید کہنا تھا کہ چور چور کے نعرے لگائے گئے لیکن اصل چوری ان 16ماہ میں کی گئی، جو چینی اور آٹے کے بحران کے ذمہ دار ہیں وہی اب صورتحال کو کنٹرول کررہے ہیں۔ پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما اور سندھ کے وزیر اطلاعات سعید غنی کا کہنا ہے کہ ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل کی رپورٹ نے حکومت کے دعووں کو بے نقاب کردیا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ مہنگائی و بیروزگاری نے گزشتہ ایک سال میں غریب کی کمر توڑ دی، 10 سال بعد ملک کا ٹرانسپیرنسی انڈیکس تنزلی کا شکار ہوا، رپورٹ اس بات کا ثبوت ہے کہ پاکستان میں اس سال کرپشن میں اضافہ ہوا ہے۔ ’حکومت کرپشن کے خاتمے کا بیانیہ لے کر آئی تھی لیکن کرپشن بڑھ رہی ہے‘عوامی نیشنل پارٹی (اے این پی) کے رہنما زاہد خان نے کہا ہے کہ حکومت ملک میں کرپشن کے خاتمے کا بیانیہ لے کر آئی تھی لیکن کرپشن کم ہونے کے بجائے بڑھ رہی ہے۔زاہد خان کا کہنا تھا کہ ہزار سے 1500درخت لگے، لیکن دعوے ایک ارب کے کررہے ہیں، حکمرانوں نے لوگوں کو بے روزگار کردیا ہے اورصنعتیں بند ہیں۔متحدہ قومی موومنٹ پاکستان (ایم کیوایم) کے رہنما فیصل سبزواری کابھی کہنا ہے کہ ٹرانسپیرنسی کی رپورٹ وزیراعظم کے لیے پریشانی کی بات ہے، ملک کی معاشی صورتحال پر سب جماعتوں کو ساتھ بیٹھنا چاہیے۔رہنما مسلم لیگ ن اور پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈرحمزہ شہباز نے ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل کی رپورٹ کو پی ٹی آئی حکومت کیلیے مکافات عمل قرار دیا ہے۔پنجاب اسمبلی کے باہر گفتگو میں حمزہ شہباز کا کہنا تھاکہ نیا پاکستان تو بنا نہیں، اب ڈھونڈنے سے پرانا پاکستان بھی نظر نہیں آرہا۔ پیپلزپارٹی کی سینئر نائب صدر شیری رحمن نے کہاہے کہ ہم تو بہت پہلے کہہ چکے ہیں اس دور حکومت میں کرپشن بڑھی ہے شیری رحمن نے کہاکہ ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل کی رپورٹ حکومت کے خلاف چارج شیٹ ہے، وزیر اعظم نے گزشتہ حکومتوں پر کرپشن پر الزامات لگائے۔شیری رحمان نے کہاکہ عالمی ادارے نے احتسابی سرکار کو بے نقاب کر دیا ہے، رپورٹ میں پاکستان 117 سے 120 ویں نمبر پر چلا گیا ہے۔شیری رحمان نے کہاکہ اس حکومت نے کرپشن ختم کرنے کا دعویٰ کیا تھا۔ انہوں نے کہاکہ ثابت ہو گیا کرپشن ختم یا کم نہیں ہوئی بڑھ گئی ہے، مالم جبہ، بی آر ٹی اور دیگر کرپشن اسکینڈل سے ابھی پردہ اٹھنا ہے۔انہوں نے کہاکہ حکومت کے تمام تر دعوہ جھوٹے ثابت ہو رہے، یہ حکومت کرپشن کا خاتمہ نہیں بلکہ کرپشن کے رکارڈ بنائے گی۔مرکزی ترجمان پاکستان پیپلز پارٹی سینیٹر مولابخش چانڈیو نے کہا ہے کہ ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل نے عمران خان کی طرز حکمرانی کو بے نقاب کر دیا۔ ایک بیان میں انہوں نے کہاکہ عمران سرکار میں کرپشن میں اضافہ ہونا تھا جو ہوا، ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل کی رپورٹ کے بعد حکمران قوم کو کیا منہ دکھائیں گے۔ انہوں نے کہاکہ مخالفین پر کرپشن کا الزام لگانے والوں کی اپنی کرپشن پر ایک عالمی ادارے نے انگلی اٹھا دی ہے، اس حکومت کے پاس اقتدار میں رہنے کا جواز ہے نہ کسی اور پر بات کرنے کا جواز ہے۔مولابخش چانڈیو نے کہاکہ خود حکومتی وزرا اپنی حکومت پر کرپشن اور بیڈ گورننس کا الزام لگا رہے ہیں،عمران خان حکومت میں بحران اور کرپشن بڑھی ہے۔ مولابخش چانڈیو نے کہاکہ اس حکومت نے لوگوں سے نوکریاں گھر یہاں تک کہ آٹا بھی چھین لیا،وفاق ہو یا خیبر ہختونخواہ اور پنجاب ہر جگہ حکومت نام کی کوئی چیز نہیں۔

اپوزیشن

مزید : صفحہ اول