عوام نے بحران کے خدشہ کے باعث چینی سٹاک کرنا شروع کردی

  عوام نے بحران کے خدشہ کے باعث چینی سٹاک کرنا شروع کردی

  



لاہور(نیوز رپورٹر) ملک بھر میں جاری آٹا بحران کے باعث عوام نے اپنے گھروں میں چینی بحران سے بچنے کے لیے چینی سٹاک کرنا شروع کر دی۔جبکہ مارکیٹ میں چینی مہنگے داموں فروخت کرنے کا بھی انکشاف ہوا ہے۔تفصیلات کے مطابق ملک میں آٹا بحران ختم نہیں ہوا اور عوام نے چینی بحران سے بچنے اور مہنگی چینی خریدنے سے بچنے کی حکمت عملی اپناتے ہوئے اپنے گھروں میں چینی سٹاک کرنا شروع کر دی ہے۔ اس حوالے سے روز نامہ پاکستان کے سروے میں،ذوالفقار،اسد،محمد بوٹا،نصیر احمد و دیگر نے کہا کے ملک میں اگر آٹے کا بحران ہے تو پھر آئندہ بحران کے لیے بھی تیار رہنا چاہیے اور اطلاعات کے مطابق چینی بحران پیدا کرنے کی سازشیں ہو رہی ہیں۔آگے ہی عوام دو وقت کی روٹی کو ترس رہی ہے اور حکمرانوں کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگ رہی۔ہمیں خدشہ ہے کے جلد ہی عوام چینی کے بحران سے بھی پریشان دکھائی دیں گے اور جس طرح غریب کی پہنچ سے آٹا دور ہے اسی طرح چینی بھی دور کر نے کی کوششیں کی جارہی ہیں۔ عوام جائے تو کہاں جائے۔کس سے جا کر اپنے دکھوں کا مداوا کرے اور کون ہے جو ہمارے دکھوں کا علاج کر سکے۔دوسری جانب انکشاف ہوا ہے کہ شہر میں چینی مہنگے داموں فروخت کرنے کے لیے دوکانداروں نے بھی چینی سٹاک کرنا شروع کر دی ہے۔

چینی سٹاک

مزید : صفحہ اول