انسٹی ٹیوٹ آف ڈیزرٹ سٹڈیز اسلامیہ  یونیورسٹی اور یو این او ترقیاتی پروگرام  کے زیر اہتمام اجلاس‘ فیلڈ ایشوز پر  تفصیلی تبادلہ خیال‘ بحث‘ مشاورت

انسٹی ٹیوٹ آف ڈیزرٹ سٹڈیز اسلامیہ  یونیورسٹی اور یو این او ترقیاتی پروگرام  ...

  

 بہاولپور(بیورو رپورٹ)چولستان انسٹی ٹیوٹ آف ڈیزرٹ سٹڈیز اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور اور اقوام متحدہ کے ترقیاتی پروگرام (UNDB) کے زیر اہتمام پروٹیکٹڈ ایریاز منیجمنٹ آف پاکستان کے حوالے سے اجلاس (بقیہ نمبر43صفحہ 7پر)

منعقد ہوا۔ اجلاس کی صدارت انجینئر پروفیسر ڈاکٹر اطہر محبوب وائس چانسلر اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور نے کی۔ تمام صوبوں سے محکمہ جنگلات اور وائلڈ لائف کے مختلف اسٹیک ہولڈرز، یو این ڈی پی، ای وی کے 2 سی این آر، ایچ ایف آئی کے نمائندوں اور جامعہ اسلامیہ کے اساتذہ نے اجلاس میں قدرتی وسائل کے تحفظ کے منصوبے کو حتمی شکل دینے کے لیے شرکت کی۔ پروفیسر ڈاکٹر شازیہ انجم۔ ڈائریکٹر چولستان انسٹی ٹیوٹ آف ڈیزرٹ سٹڈیز اسلامیہ یونیورسٹی بہاول پور نے اجلاس کے تمام ممبران کا خیرمقدم کیا۔ اس موقع پر عاشق احمد خان عالمی کنزرویشنسٹ اور ایو- K2-CNR کے سائنسی نمائندے) نے اس بات پر زور دیا کہ اس وقت کی نازک صورتحال کی ضرورت ہے کہ وہ محققین اور منتظمین کو ساتھ لائیں، فیلڈ ایشوز پر تبادلہ خیال اور سائنسی تحقیق کے ذریعے ان سے نمٹنے کے لئے ضروری انتظامات کریں۔ انہوں نے انجینئر پروفیسر ڈاکٹر اطہر محبوب وائس چانسلر کی یونیورسٹی کی بہتری کے لئے تمام کوششوں کی تعریف کی۔ انجینئر پروفیسر ڈاکٹر اطہر محبوب وائس چانسلر نے تحفظ کے امور اور مستقبل کی نسل میں تنقیدی سوچ پیدا کرنے کے لئے ان کے جامع طرز عمل کے بارے میں بتایا۔ انہوں نے یونیورسٹی محققین خصوصا CIDS کی تعریف کی کہ شعبہ نے اپنے وعدوں کو پوری کرنے کی طویل روایت برقرار رکھی ہے اور اگر وہ معاشی رکاوٹوں کو دور کرتے ہیں تو وہ حیرت زدہ کر سکتے ہیں۔ انہوں نے مزید تحقیقاتی منصوبوں، مفاہمت ناموں اور آئی یو بی کے محققین کو یو این ڈی پی کی مالی مدد پر زور دیا۔ اجلاس اس نتیجے پر اختتام پزیر ہوا کہ قدرتی وسائل کا سائنسی انتظام اپنی برادریوں اور ان کی بہتر معاش کے استحکام کے لئے انتہائی ضروری ہے۔ 

تفصیلی مشاورت

مزید :

ملتان صفحہ آخر -