تین مردوں کو قتل کرنیوالی ہم جنس پرست خاتون کا ساتھی قیدی کیساتھ معاشقہ بھی انجام کو پہنچ گیا

تین مردوں کو قتل کرنیوالی ہم جنس پرست خاتون کا ساتھی قیدی کیساتھ معاشقہ بھی ...
تین مردوں کو قتل کرنیوالی ہم جنس پرست خاتون کا ساتھی قیدی کیساتھ معاشقہ بھی انجام کو پہنچ گیا

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) برطانیہ میں تین مردوں کو قتل کرکے تاحیات قید کی سزاپانے والی ہم جنس پرست خاتون کا اپنی ساتھی قیدی خاتون کے ساتھ معاشقہ انجام کو پہنچ گیا۔ ڈیلی سٹار کے مطابق جواینا ڈینی نامی اس خاتون نے 2013ءمیں برطانوی کاﺅنٹی کیمبرج شر میں یکے بعد دیگرے تین مردوں کو خنجروں کے وار کرکے موت کے گھاٹ اتارا تھا۔ اس کے ہاتھوں قتل ہونے والا پہلا شخص پولینڈ کا 31سالہ شہری لوکاسز سلابوسزیوسکی تھا۔ اسے ڈینی نے جنسی تعلق قائم کرنے کا جھانسہ دے کر بلایا اور دل میں خنجر گھونپ کر قتل کر دیا تھا۔

اس کے بعد ڈینی نے اپنے 56سالہ ’ہاﺅس میٹ‘ جان شیپ مین اور پھر پراپرٹی ڈویلپر اور لینڈ لارڈ کیوین لی کو قتل کیا۔ برطانوی تاریخ میں اب تک صرف تین خواتین کو تاحیات قید کی سزا دی گئی ہے، جن میں سے ایک ڈینی ہے۔ ڈینی کو برطانوی جیل ایچ ایم پی برونز فیلڈ میں قید کیا گیا تھا جہاں اس نے اپنی ساتھی قیدی ہیلے پالمر کے ساتھ تعلق قائم کر لیا۔ چندماہ قبل ہیلے پالمر کی سزا پوری ہونے پر اسے رہا کر دیا گیا جس کے بعد دونوں خط و کتابت کے ذریعے رابطے میں رہیں۔

ہیلے پالمر نے برطانوی اخبار ’دی سن‘ سے گفتگو کرتے ہوئے بتا یا ہے کہ ”ڈینی کو اپنی تہرے قتل کی واردات پر کوئی پچھتاوا نہیں ہے بلکہ وہ اس پر قہقہے لگا کر ہنستی ہے۔ وہ مجھے کہتی تھی کہ مجھے اس کی شکل میں ایک مکمل ذہنی مریض بوائے فرینڈ مل گیا ہے۔ ہم دونوں نے جیل میں اکٹھے کافی وقت گزارا۔ ہم دونوں ایک دوسری سے اس قدر محبت کرتی تھیں کہ ہم نے شادی کرنے کا فیصلہ بھی کر لیا تھا تاہم میرے جیل سے رہا ہونے کے چند ماہ بعد ڈینی نے میرے ساتھ رابطہ منقطع کر لیا۔ اگر وہ مجھے خط لکھا بند نہ کرتی تو میں اس کے ساتھ تعلق کبھی ختم نہ کرتی۔“

مزید :

برطانیہ -