توہین عدالت قانون کیخلا ف وکلاءنے یوم احتجاج منایا‘ہڑتال عدالتی بائیکاٹ :بارکونسلوں پر سیاہ جھنڈے لہرائے گئے

توہین عدالت قانون کیخلا ف وکلاءنے یوم احتجاج منایا‘ہڑتال عدالتی بائیکاٹ ...

  

اسلام آباد(آن لائن) توہین عدالت قانون کے خلاف وکلاءنے پیر کو ملک بھر میں یوم احتجاج منایا۔ لاہور، کراچی ،پشاور، فیصل آباد، کوئٹہ، ملتان،سکھر ، گوجرانوالہ اور میانوالی سمیت ملک بھر میں وکلا عدالت میں پیش نہ ہوئے۔لاہور ہائیکورٹ میں وکلاءکی طرف سے جزوی ہڑتال دیکھنے میں آئی جبکہ ماتحت عدالتوں میں وکلاءکی ہڑتال کے باعث سینکڑوں مقدمات کی سماعت نہ ہوسکی جس کی وجہ سے سائلین کوبھی مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔ لاہور ہائیکورٹ بار اور لاہور بار میں بھی وکلاءنے توہین عدالت کے نئے قانون کیخلاف یوم سیاہ مناتے ہوئے بار ایسوسی ایشن میں سیاہ جھنڈے بھی لہرائے۔ وکلا کے عدالتوں میں نہ آنے سے کیسوں میں آئندہ کی تاریخ دی گئی۔ بار ایسوسی ایشنوں اور با ر کونسلوں پر کالے جھنڈے لہرا ئے گئے اور وکلاءنے بازویں پر کالی پٹیاں باندھی ہ،احتجاجی میٹنگ سے خطاب کر تے ہوئے چیئرمین ایگزیکٹو پاکستان بار کونسل فرحان معظم کا کہنا تھا کہ توہین عدالت کا نیا قانون، کالا قانون ہے اور یہ عدلیہ کو زیر کرنے کی کوشش ہے۔ ننکانہ صاحب ڈسٹرکٹ بار میں بھی عدلیہ سے اظہار یکجہتی اور توہین عدالت کے نئے قانون کیخلاف وکلا نے ہڑتال کی۔ وکلا رہنماو¿ں کا کہنا ہے کہ حکمرانوں نے چند افراد کو بچانے اور سپریم کورٹ پر شپ خون مارنے کے لیے یہ قانون بنایا جسے پوری وکلا برادری اور عوام نے مسترد کردیا ہے۔

مزید :

صفحہ اول -