پی پی ڈی سی کے نئے چیف ایگزیکٹو نے پاور پلانٹ لگانے کیلئے قواعدوضوابط دھجیاں بکھیردیں

پی پی ڈی سی کے نئے چیف ایگزیکٹو نے پاور پلانٹ لگانے کیلئے قواعدوضوابط دھجیاں ...

  

لاہور (شہباز اکمل جندران) پنجاب پاور ڈویلپمنٹ کمپنی کے چیف ایگزیکٹو نے اپنی تعیناتی کے ایک ماہ بعد ہی قواعد وضوابط کی دھجیاں بکھیرں دیں۔ سی ای او پی پی ڈی سی ایل فرخ علی شاہ نے سندر انڈسٹریل اسٹیٹ اور فیصل آباد میں 50، 50میگا واٹ کے کوئلے کے پاور پلانٹ لگانے کے لئے بورڈ آف ڈائریکٹر ز کی اجاز ت کے بغیر ہی اخبار میں اشتہار دیدیا،لیکن تحریری صورت میں پروپوزل دستیاب نہ ہونے کی وجہ سے کسی بھی کنسلٹینسی فرم کو آر ایف پی فراہم نہ کی جاسکی ، فرموں کے نمائیندے چکر پہ چکر کاٹنے لگے، تفصیلات کے مطابق صوبائی حکومت نے بجلی پیدا کرنے کے منصوبوں کی تشہیر ، پیدا شدہ بجلی کی فروخت اور بجلی کی پیداوار اور خریدو فروخت و ترسیل میں دلچسپی رکھنے والی کمپنیوں کومتوجہ کرنے کے لیئے پنجاب پاور ڈویلپمنٹ کمپنی لمیٹڈ قائم کی ، کمپنی کے موجودہ چیف ایگزیکٹو فرخ علی شاہ جنہوں نے 12جون 2012کو اپنے عہدے کا چارج سنبھالا، نئے چیف ایگزیکٹو نے کمپنی کے تمام بورڈ آف ڈائریکٹر ز کی اجازت کے بغیر ہی سندر انڈسٹریل اسٹیٹ لاہور اور ایم تھری فیصل آبادکوئلے سے بجلی تیار کرنے والے 50، 50میگا واٹ کے دو پاور پلانٹ لگانے کے لیے اخبار میں اشتہار دیدیا ، اور اشتہار کے جواب میں کنسلٹنٹ فرموں نے آر ایف پی کے حصول کے لیئے پی پی ڈی سی ایل کے دفتر سے رجوع کیا تو انہیں بتایاگیا کہ بورڈ آف ڈائریکٹر ز نے ابھی تک تحریری شکل میں پروپوزل کی منظوری ہی نہیں دی ،جبکہ پروپوزل کے بغیر اخبارات میں اشتہا ر دیا جانا خلاف ضابطہ ہے، یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ آر ایف پی کے بغیر اخبارات میں اشتہار دیئے جانے سے بورڈ آف ڈائریکٹر ز نے بھی سی ای او کی اس حرکت کو ناپسند کیا ہے ذرائع کا کہنا ہے کہ اخبار میں اشتہار کے بعد آر ایف پی تیار نہیں ہوسکتی اورآر ایف پی کی تیار ی کے بعد کمپنی کو ضابطے کے مطابق ایکبا رپھر سے اخبار میں اشتہار دیناہوگا،ا س سلسلے میں گفتگو کے لیئے پی پی ڈی سی ایل کے سی ای او فرخ علی شاہ سے رابط کیا گیا تو ان سے بات نہ ہوسکی۔

مزید :

صفحہ آخر -