فلسطینی مسافروں کےساتھ اس قدر شرمناک سلوک سابق دور میں بھی نہیں ہوا ہے

فلسطینی مسافروں کےساتھ اس قدر شرمناک سلوک سابق دور میں بھی نہیں ہوا ہے

  

 غزہ ( اے این این ) مصرکے قاہرہ میں بین الاقوامی ہوائی اڈے پر انتظامیہ نے فلسطینی مسافروں کے ساتھ بدسلوکی کی ہے جس پر فلسطینی عوام اور سیاسی حلقوں کی جانب سے سخت رد عمل سامنے آیا ہے۔مرکزطلاعات فلسطین کے مطابق حال ہی میں غزہ کی پٹی سے رفح باڈر کے راستے مصر سے سعودی عرب اور دوسرے ممالک جانے والے فلسطینی مسافروں کے ساتھ توہین آمیز سلوک کے کئی واقعات سامنے آئے تھے۔ دو دورز قبل غزہ سے عمرے کی غرض سے جانے والے کئی فلسطینی مسافروں کو قاہرہ ہوائی اڈے کی انتظامیہ نے کئی گھنٹے ایئرپورٹ پر روکے رکھا اور ان کے ساتھ نہایت توہین آمیز سلوک کیا گیا۔فلسطینیوں کے ساتھ ہونے والی اس بدسلوکی پرغزہ کی پٹی میں حماس کی حکومت کے وزیر برائے مذہبی امورصالح الرقب نے گہری تشویش کا اظہار کیا ہے۔ انہوں نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ فلسطینی مسافروں کےساتھ اس قدر شرمناک سلوک سابق آمر صدر حسنی مبارک کے دور میں بھی نہیں ہوا ہے۔ ما بعد انقلاب مصر کی جمہوری حکومت کے ہوتے ہوئے فلسطینیوں کے ساتھ اس طرح کے نارروا سلوک کی توقع نہیں کی جانی چاہیے۔ انہوں نے مصری صدر ڈاکٹر محمد مرسی سے مطالبہ کیا کہ وہ ہوائی اڈے پر فلسطینیوں کے ساتھ ہونے والی بدسلوکی کا نوٹس لے اور واقعے کی تحقیقات کے لیے فوری طورپر انکوائری کمیٹی قائم کی جائے۔

مزید :

عالمی منظر -