سیلولر کمپنیوں کو یکم اگست سے سمیں براہ راست فعال نہ کر نے کاحکم

سیلولر کمپنیوں کو یکم اگست سے سمیں براہ راست فعال نہ کر نے کاحکم

  

                                   اسلام آباد(آن لائن) پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی نے یکم اگست سے کال سینٹر سے سمز فعال کرانے کا عمل روکنے کے احکامات جاری کردیئے جس کے بعد سمز بائیو میٹرک مشین سے تصدیق کے بعد ہی جاری کی جائیں گی۔نجی ٹی وی کے مطابق غیر قانونی سموں کی فروخت روکنے کے لئے پی ٹی اے نے احکامات جاری کرتے ہوئے ہدایت کی ہے کہ صارفین آئندہ بائیو میٹرک مشینوں والے سینٹرز سے ہی سمیں خریدیں جبکہ یکم اگست سے کال سینٹرز سے سم فعال کرانے کا عمل بھی روک دیا جائے گا۔ پی ٹی اے نے موبائل سمز فعال کرنے کے لئے بائیو میٹرک تصدیق لازمی قرار دی ہے جس کے بعد صارفین کو بائیو میٹرک مشین پر انگوٹھا رکھ کر رجسٹریشن کرانا ہوگی۔پی ٹی اے کا کہنا ہے کہ صارفین کی بائیو میٹرک مشین پر تصدیقی عمل مکمل ہونے کے بعد آدھے گھنٹے میں سم ایکٹیو کردی جائے گی جس کے لئے صارف کا فرنچائز پر اصل شناختی کارڈ دکھانا لازمی ہوگا۔

مزید :

کامرس -