درخت چوری کے 70ہزار واقعات کو دبانے کا انکشاف

درخت چوری کے 70ہزار واقعات کو دبانے کا انکشاف

  

                                             لاہور(شہباز اکمل جندران//انویسٹی گیشن سیل) محکمہ جنگلات پنجاب کے زیر کنٹرول صوبے کے مختلف شہروں میں درخت چوری کرنے اوردرختوں کو نقصان پہنچانے کے 70ہزار سے زائد ایسے واقعات کا انکشاف ہوا ہے جن کی رپورٹس دبا دی گئی ہیںمذکورہ رپورٹس کے نہ تو جرمانے وصول کئے گئے ہیں اور نہ ہی چالان عدالتوں میں پیش کئے گئے ہیںجس سے محکمے کو کروڑوں روپے کے نقصان کا سامنا ہے ذرائع نے انکشاف کیا ہے کہ صوبے کے مختلف شہروں میں ٹمبر مافیا کی کارروائیاں روز بروز بڑھنے لگی ہیںاور محکمہ جنگلات کے ملازمین لالچ میں اس مافیا کے اہلکار بن گئے ہیںیہی وجہ ہے کہ میانوالی ،بھکر ، بہاولپور ، قصور ، رحیم یارخان،چیچہ وطنی،اوکاڑہ ، بہاولنگر ، گوجرانوالہ ، لیہ ، جہلم ، راجن پور، ملتان اور دیگر شہروں میں درخت چور ی کرنے ، درخت کاٹنے اور درختوں کو جزوی نقصان پہنچانے کی 70ہزار سے زائد ڈیمج (DAMAGE)رپورٹیں متعلقہ اہلکاروں نے دبا دی ہیںان رپورٹوں کی روشنی میں نہ تو ٹمبر مافیا کو جرمانے کئے گئے اور نہ ہی ان کے چالان متعلقہ عدالتوں کو بھجوائے گئے ہیںفاریسٹ ایکٹ 1927کے سیکشن 66کے مطابق فاریسٹ گارڈ اپنے علاقے میں دوران گشت کہیں درختوں کو کٹا یا نقصان کی حالت میں پاتا ہے تو وہ معلوم یا نہ معلوم چوروں یا درخت کو نقصان پہنچانے والوں کے خلاف ڈیمج رپورٹیںلکھ پر متعلقہ بلاک افسر یا رینج فاریسٹ افسر کو پیش کرتا ہے جو کیس کی تفتیش کرتا ہے اور ضمنیوں کے انداز میں تفتیش کی تحریر نوٹ کرتا ہے اور چوروں کے نام معلوم ہونے پر انہیں گرفتار کرکے جرمانہ وصول کرتا ہے چور یا درخت کو نقصان پہنچانے والا شخص جرمانہ ادا کرتا ہے تو ڈیمج رپورٹ کمپاﺅنڈ ہوجاتا ہے اور جرمانہ ادا نہ کرنے کیصورت ملزم کے خلاف چالان تیار کرکے عدالت کو بھیج دیا جاتا ہے محکمہ جنگلات کے ملازمین نے مبینہ طورپرٹمبر مافیا کے ساتھ مل کر صوبے بھر میں گزشتہ دوبرسوں کے دوران ہزاروں درخت کاٹے ہیں اسی طرح ہزاروں ہی درختوں کو نقصان بھی پہنچایا گیا ہے جس کے جواب میں فاریسٹ سٹاف نے ایسے واقعات کی ڈیمج رپورٹیں تو کاٹی ہیں لیکن نہ تو یہ رپورٹیں کمپاﺅنڈ ہوئی ہیںاور نہ ان کے چالان عدالتوں کو ارسال کئے گئے جس سے محکمے کو سالانہ کروڑوں روپے کے نقصان کا سامنا ہے اس سلسلے میں گفتگو کرتے ہوئے محکمے کے ترجمان کا کہناتھا کہ وہ ایسی رپورٹس کے متعلق نہیں جانتے تاہم صوبائی حکومت ، محکمے میں کسی قسم کی کرپشن اور بدعنوانی کو برداشت نہیں کرتی

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -