تاجروں کا عید کے بعد ٹیکس، مہنگائی اور لوڈشیڈنگ کے خلاف شٹرڈاﺅن کا فیصلہ

تاجروں کا عید کے بعد ٹیکس، مہنگائی اور لوڈشیڈنگ کے خلاف شٹرڈاﺅن کا فیصلہ
تاجروں کا عید کے بعد ٹیکس، مہنگائی اور لوڈشیڈنگ کے خلاف شٹرڈاﺅن کا فیصلہ

  

لاہور (ویب ڈیسک) لاہور کے تاجروں نے، ریٹیلرزنے جنرل سیلز ٹیکس، مہنگائی، غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ اور بجلی کی قیمتوں میں بے پناہ اضافہ کیخلاف عید کے بعد شٹر ڈاﺅن ہڑتال کا فیصلہ کرلیا، اس سلسلہ میں دو تاجر تنظیموں کے عہدیداروں نے اپوزیشن جماعتوں سے بھی رابطے کئے ہیں اور ان سے مدد مانگی ہے۔

 تاجر نمائندوں کے خفیہ اجلاسوں کی اطلاعات بھی ملی ہیں، سٹاک کی موجودگی کے باوجود مارکیٹوں میں خریداروں کی ویرانی نے تاجرون کو مفلوج کردیا ہے جس پر تاجروں نے پنجاب بھر کی تاجر تنظیموں سے رابطے تیز کردئیے ہیں اور فیصلہ کیا ہے کہ ایس آر او 608، ایک سو بیس فیصد پراپرٹی ٹیکس اور لوڈشیڈنگ کا دورانیہ کم نہ ہوا تومجبوراً عید کے بعد احتجاجی کیمپ، احتجاجی مظاہروں اور شٹر ڈاﺅن کا حتمی فیصلہ کیا جائے گا۔ اس سلسلہ میں حکومت کے حامی تاجروں نے بھی احتجاج میں شامل ہونے کی حامی بھر لی۔

 مقامی میڈیا کے مطابق تاجروں کا کہنا ہے کہ اندھیرے کے باعث کاروباری اور معاشی سرگرمیاں مفلوج ہوکررہ گئی ہیں، ایسے حالات میں ریٹیلرز پر سیلز ٹیکس، ایس آر او کے ذریعے بیوروکریسی کو دکانوں میں داخلے کی اجازت اور آمدن چیک کرنے جیسے فیصلے ملکی معیشت کو مزید تباہ کرنے کی سازش ہیں۔ ایسے فیصلوں کے خلاف بھرپور احتجاج اور سڑکوں پرآسکتے ہیں۔

مزید :

لاہور -