کشمیر کے مستقبل کافیصلہ بھارتی وزیر خارجہ نے نہیں کشمیریوں نے خود کرناہے :سرتاج عزیز

کشمیر کے مستقبل کافیصلہ بھارتی وزیر خارجہ نے نہیں کشمیریوں نے خود کرناہے ...
کشمیر کے مستقبل کافیصلہ بھارتی وزیر خارجہ نے نہیں کشمیریوں نے خود کرناہے :سرتاج عزیز

  

اسلام آباد(مانیڑنگ ڈیسک)مشیر خارجہ سرتاج عزیز نے کہاہے کہ کشمیریوں کے مستقبل کافیصلہ بھارتی وزیر خارجہ نے نہیں بلکہ خود کشمیریوں نے کرناہے ،بھارت اقوام متحدہ کی زیر نگرانی مقبوضہ کشمیر میں رائے شماری کروائے ،یہ کشمیری عوام کا حق ہے کہ وہ پاکستان کیساتھ الحاق کریں یا بھارت کیساتھ،رائے شماری سے کشمیری عوام جوفیصلہ کریں گے وہ پوری دنیا تسلیم کرے گی۔

سرتاج عزیز نے بھارتی وزیر خارجہ سشما سوراج کے بیان پر رد عمل دیتے ہوئے کہا کہ کشمیر کے مستقبل کافیصلہ صرف کشمیری عوام کا حق ہے ،کشمیریوں کے مستقبل کافیصلہ بھارتی وزیرخارجہ نے نہیں بلکہ خودکشمیریوں نے کرناہے،سشما سوراج نے یہ بھی کہا کہ کشمیر کبھی پاکستان کا حصہ نہیں بنے گا،سشما سوراج نے اپنے بیان میں کشمیرکوبھارت کی جاگیر قرار دیا۔انہوں نے کہا کہ کشمیر کا مسئلہ استصواب رائے سے ہی حل ہو سکتاہے ،کشمیری پاکستان کے حق میں ووٹ دیتے ہیں یا بھارت کے ،فیصلہ جو بھی ہو گا پوری دنیا قبول کرے گی ، اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کشمیریوں کو یہ حق دلانے کا وعدہ کر چکی ہے ۔

سرتاج عزیز کا کہناتھا کہ اب وقت آ گیاہے کہ بھارت اقوام متحدہ کی زیر نگرانی مقبوضہ کشمیر میں رائے شماری کروائے ،یہ کشمیری عوام کا حق ہے کہ وہ پاکستان کیساتھ الحاق کریں یا بھارت کیساتھ،رائے شماری سے کشمیری عوام جوفیصلہ کریں گے وہ پوری دنیا تسلیم کرے گی۔ان کا کہناتھا کہ سشماج سوراج کہتی ہیں کہ براہان وانی بھارت کیلئے دہشتگرد تھا ،برہان وانی کے جنازے میں 2لاکھ سے زائد افراد نے شرکت کی ،بھارت یہ بات نظر انداز نہیں کر سکتا ۔

مزید : قومی /اہم خبریں