وادی زیتون ،کاشتکاروں کو 20 لاکھ پودے مفت فراہم کیے جائیں گے

وادی زیتون ،کاشتکاروں کو 20 لاکھ پودے مفت فراہم کیے جائیں گے

راولپنڈی (این این آئی)محکمہ زراعت پنجاب کے ترجمان نے کہاہے کہ پوٹھوہار کو زیتون کی وادی بنانے کیلئے اربوں روپے کی لاگت سے کاشتکاروں کو زیتون کے پودے مفت فراہم کرنے کے منصوبہ پر کام جاری ہے اس پانچ سالہ (2015-2020) منصوبہ کے تحت کاشتکاروں کو 20 لاکھ پودے مفت فراہم کیے جائیں گے اور 70 فیصد سبسڈی پر واٹر سورس بھی فراہم کی جا رہی ہے جس کا مقصد بارانی علاقوں میں زیتون کی کاشت کو فروغ دے کر کاشتکاروں کے منافع میں اضافہ کرنے کے ساتھ خوردنی تیل کے درآمدی بل کو کم کرنا ہے۔ ڈائریکٹر بارانی زرعی انسٹی ٹیوٹ (باری ) محمد طارق کے مطابق کاشتکار اگر زیتون کی کاشت کے ساتھ ساتھ زیتون کی پراسیسنگ اور ویلیو ایڈیشن کیلئے جدید ٹیکنالوجی سے بھی استفادہ حاصل کریں تو بارانی علاقوں میں زیتون کی کاشت سے خطہ کو معاشی طور پر مزید مستحکم بنانے میں مدد ملے گی۔ بارانی علاقوں میں بارشوں کے پانی سے زیادہ سے زیادہ فائدہ اٹھانے کیلئے محکمہ زراعت کاشتکاروں کی رہنمائی کرتا ہے۔ بارانی زرعی تحقیقاتی ادارہ چکوال نے پانی کے ضیاع پر قابو پانے کے طریقے بھی دریافت کیے ہیں۔

ضرورت اس بات کی ہے کہ جدید ٹیکنالوجی کے ذریعے بارش کے ایک ایک قطرہ سے استفادہ کیا جائے۔ اگر پانی کے ضیاع پر قابو پایا جا سکے تو بارانی علاقوں کی پیداواری صلاحیت بڑھائی جا سکتی ہے۔ بارانی علاقوں کی اس اہمیت کے پیش نظر محکمہ زراعت پنجاب ان علاقوں کے کاشتکاروں کو ان کے موسمی حالات اور آب و ہوا کے مطابق ٹیکنالوجی پیکیج سے آگاہ کر رہا ہے۔ امید ہے کہ ان اقدام کے نتیجہ میں کاشتکار بلحاظ علاقہ پیداواری ٹیکنالوجی سے بھرپور استفادہ کریں گے جس سے بارانی علاقوں کی پیداواری استعداد اور کاشتکاروں کی آمدن میں مزید اضافہ ہوگا۔

مزید : کامرس


loading...