سپریم کورٹ وزیراعظم کو نااہل کرنے کا اختیار نہیں رکھتی،منظور گیلانی

سپریم کورٹ وزیراعظم کو نااہل کرنے کا اختیار نہیں رکھتی،منظور گیلانی

  



لاہور(این ایل آئی)استقلال پارٹی کے سربراہ منظور گیلانی نے کہا کہ سپریم کورٹ آئین کے آرٹیکل 184/3کے تحت وزیراعظم کو نااہل کرنے کا اختیار نہیں رکھتی اگر عدالت عظمی کی طرف سے وزیراعظم کی نااہلی کے متعلق کوئی فیصلہ آیا تو پارلیمنٹ اس فیصلے کو کالعدم قرار دے سکتی ہے جبکہ ملک میں پارلیمانی نظام مکمل طور پر ناکام ہوچکا ہے اور اب وقت آچکا ہے کہ آئین میں تبدیلی کرکے اسکی جگہ صدارتی نظام کو نافذ کرکے حکومت کی مدت 4 سال کردی جائے جس میں صدر اور گورنرز براہ راست منتخب کیے جائیں پارلیمنٹ اور صوبائی اسمبلیاں صرف قانون سازی کریں حکومت سازی میں ان اسمبلیوں کا کوئی کردار نہیں ہونا چاہیے اسکے ساتھ ساتھ آبادی کے تناسب سے پنجاب کو تین صوبوں ،سندھ اور کے پی کے کو مزید دو صوبوں میں تقسیم کردیا جائے استقلال پارٹی کے 17 ویں یوم تاسیس کے حوالے سے منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ملک میں خارجہ پالیسی نہ ہونے کی وجہ سے آج ہمارے دوست ملک بھی ہم سے دور ہوچکے ہیں امریکہ ،سعودیہ ،ایران اور افغانستان سے تعلقات کشیدہ ہیں جو وزیراعظم میاں نواز شریف کی آمرانہ پالیسیوں کا نتیجہ ہے اور اس وقت ملک میں موجودہ شدید آئینی بحران کو حل کرنے کے لیے پالیمنٹ کو کردار ادا کرنا چاہیے جبکہ سپریم کورٹ جو بھی فیصلہ کرے آخری فیصلہ پالیمنٹ کو ہی کرنا ھو گا کیونکہ پاکستان کے عوام اورعوام دوست قوتیں کسی صورت حق حاکمیت سے دستبردار نہیں ہوں گے۔

منظور گیلانی

مزید : صفحہ آخر


loading...