خاتون حادثے میں جاں بحق، شوہر نے بیوی قتل کر دی، بچی دریا میں ڈوب گئی

خاتون حادثے میں جاں بحق، شوہر نے بیوی قتل کر دی، بچی دریا میں ڈوب گئی

لودھراں،سیت پور، روجھان، خانیوال (نمائندگان)ٹریفک حادثات میں خاتون جاں بحق،8افراد زخمی ہوگئے،شوہر نے بیوی کو قتل،10سالہ بچی نہاتے ہوئے دریا میں ڈوب کر چل بسی،کرنٹ لگنے سے خاتون چل بسی۔ لودھراں سے نمائندہ پاکستان کے مطابق کہروڑ پکا کے رہائشی(بقیہ نمبر71صفحہ7پر )

چار بہن بھائی موٹر سائیکل پر آرہے تھے کہ علیزم سکول کے قریب ٹرالر سے ٹکر ا گئے جس کے نتیجہ میں ارم بی بی موقع پر جاں بحق جبکہ دیگر دو بائی عمر دراز ، زاہد اور ان کی بہن زینب بی بی زخمی ہوگئی ۔ ٹرالر ڈرائیور فرار ہوگیا جبکہ ٹرالر پولیس تھانہ سٹی نے اپنے قبضہ میں لے لیا ۔ ٹریفک کے دوسرے حادثہ میں چک 12ایم پی آر سے آنے والا چنگ چی رکشہ افتخار پٹرولیم کے سامنے سے ون ویلنگ کرنے والے نوجوان سامنے آگیا اسے بچاتے ہوئے چاند گاڑی رکشہ الٹ گیا رکشہ میں سوار ماں بیٹا اور بیٹی اور دیگر دو خواتین زخمی ہوگئیں زخمیوں کو 1122نے طبی امداد دی اور بعد میں ڈسٹرکٹ ہسپتال ریفر کردیا گیا ۔ زخمی ہونے والی خواتین کا پرس اور موبائل فون نامعلوم شخص اٹھاکر فرار ہوگیا ۔ٹریفک حادثہ کا تیسرا واقعہ رات تین بجے سپر میلاد چوک پر ہو ا جہاں پر مزدا نمبری MNI-271بہاولپور سے سا ہیوال جا نے والا کراچی سے شیخوپورہ جانے والا آئل ٹینکر نمبری JV-0043سے ٹکرا گیا جس کے نتیجے میں مزدا ڈرائیور محمد ریاض زخمی ہوگیا ۔ جسے ڈسٹرکٹ ہسپتال ریفر کردیا گیا جبکہ مقامی پولیس اور یسکیو 1122کی ٹیمیں موقع پر پہنچ گئیں۔ سیت پور سے نمائندہ پاکستان کے مطابق تھانہ سیت پور کے دریا پار علاقہ موضع کندرالہ کے رہائشی محمد رمضان ممائی نے پولیس کو بیان دیا کہ میری بیٹی ارشاد مائی کی شادی ایک سال قبل بلال ولد کمال ممائی سے ہوئی جن کی کوئی اولاد نہ ہے ،بیٹی ارشاد مائی کے سسرال والے بنک کے مقروض ہیں جنہوں نے ارشاد مائی کو میرے گھر رقم لانے کے لئے بھیجا ،میں نے بیٹی ارشاد مائی رقم 50ہزار روپے دے دی ،شام کے وقت معلوم ہو ا کہ میرے داماد بلال نے والد کمال اور چچا نہا ل کے ہمراہ میری بیٹی ارشاد مائی پر تشدد کیا ہے اور وہ اسے بہاولپور ہسپتال لے جا رہے ہیں تو میں اپنے بھائی محمد اقبال اور بھتیجے محمد اسلم کے ہمراہ جب بہاولپور وکٹوریہ ہسپتال پہنچا تو ملزمان لاش لے کر ہسپتال کے باہر موجود تھے جو ہمیں دیکھتے ہیں غائب ہوگئے ،انہوں نے الزام عائد کیا کہ ملزمان میری بیٹی ارشاد مائی سے زیورات مانگ رہے تھے تاکہ انہیں بیچ کر بنک کا قرض اتارا جا سکے لیکن ارشاد مائی نے زیورات دینے سے انکار کر دیا تھا اسی رنجش کی بناء پر ملزمان نے ارشاد مائی کو گلا دبا یا پھر زہر دے کر قتل کیا ہے ،اطلاع ملتے ہی پولیس تھانہ سیت پور نے موقع پر پہنچ کر لاش کو تحویل میں لے کر پوسٹمارٹم کے لئے رورل ہیلتھ سنٹر سیت پور بھجوایا لیکن رورل ہیلتھ سنٹر سیت پور میں لیڈی ڈاکٹر نہ ہونے کی بناء پر ارشاد مائی کی لاش کو پوسٹمارٹم کے لئے تحصیل ہیڈکوارٹر ہسپتال علی پور بھجوایا گیا جہاں پوسٹمارٹم کے بعد ارشاد مائی لاش والدین کے حوالے کر دی گئی ،پولیس تھانہ سیت پور نے مقتولہ ارشاد مائی کے بیان پر ملزمان بلال ،کمال اور نہا ل کے خلاف مقدمہ نمبر203/17بجرم 302/34ت پ درج کرکے تفتیش شروع کر دی ہے ۔روجھان سے نمائندہ پاکستان کے مطابق محلہ شیخان کی امام بخش کی دس سالہ بچی (د) گھر کے قریب دریائے سندھ میں نہانے گئی اور نہاتے ہوئے گہرے پانی میں چلی گئی جس کے باعث اسکی موت واقع ہوگئی مقامی افراد نے اپنی مددآپ کے تحت لاش کو نکال لیا جواں سالہ بچی کی موت پر ہر آنکھ اشکبار تھی۔خانیوال سے بیورو نیوز کے مطابق نواحی علاقے مخدوم پور چک13/8Rکی رہائشی خاتون کرنٹ لگنے سے جاں بحق ہوگئی ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...