شیخ زید ہسپتال کا کنٹرول وفاق کے پاس جانے کے باوجود بورڈ تشکیل کیوں نہیں دیا گیا؟لاہور ہائیکورٹ

شیخ زید ہسپتال کا کنٹرول وفاق کے پاس جانے کے باوجود بورڈ تشکیل کیوں نہیں دیا ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائی کورٹ نے چیئرمین شیخ زید ہسپتال ڈاکٹر کامران حسین کے خلاف دائرتوہین عدالت کی درخواست کی سماعت کے دوران ہسپتال کے بورڈ آف گورنرز کی عدم تشکیل پر حیرت کا اظہار کرتے ہوئے قراردیا کہ تعجب ہے ہسپتال کا کنٹرول وفاق کے پاس جانے کے باوجود بورڈ تشکیل نہیں دیا گیا، بورڈ کی عدم تشکیل سے ہسپتال کے امور چلانا ممکن نظر نہیں آتا، عدالت نے ڈپٹی اٹارنی جنرل کو ہدایت کی کہ آئندہ تاریخ سماعت پربورڈ کی تشکیل کی بابت اقدامات سے عدالت کو آگاہ کیا جائے،درخواست گزار فری زول انٹرنشنل نے درخواست دائر کررکھی ہے جس میں کہا گیاہے کہ درخواست گزار فرم نے شیخ زید ہسپتال انتظامیہ سے ٹھیکہ حاصل کرکے تعمیراتی کام کیا، تعمیراتی کام کا 63 لاکھ 75 ہزار روپے معاوضہ ادا نہیں کیا جا رہا، عدالت نے دسمبر 2018 ء کو صدر پاکستان سے منظوری کے بعد بورڈ کی تشکیل کا حکم دیتے ہوئے درخواست پر دو ماہ میں فیصلہ کرنے کا بھی حکم دیا تھا، عدالتی حکم کے باوجود نہ تو بورڈ تشکیل دیا گیا اور نہ معاوضہ ادا کیا گیا،درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ چیئرمین شیخ زید ہسپتال کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی عمل میں لائی جائے،عدالت نے مذکورہ ہدایت کے ساتھ کیس کی سماعت ملتوی کردی۔
شیخ زید ہسپتال

مزید :

صفحہ آخر -