ضلع کوہاٹ مسائل کی آماجگاہ ہے، نسیم آفریدی

ضلع کوہاٹ مسائل کی آماجگاہ ہے، نسیم آفریدی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


کوھاٹ (بیورورپورٹ) ضلع ناظم کوھاٹ نسیم آفریدی نے کہا ہے کہ میں تسلیم کرتا ہوں کہ اس وقت ضلع کوھاٹ کو متعدد مسائل کا سامنا ہے جو ضلع کونسل کے محدود سائل کے سبب مکمل طور پر ختم تو نہیں کیے جا سکتے مگر صوبائی حکومت کی بھرپور توجہ اور مناسب مقامی منصوبہ بندی‘ منصوبون کی بروقت تکمیل‘ گڈ گورننس اور سزا و جزا کے مربوط عمل کے ذریعے ان میں کمی ضرور لائی جا سکتی ہے وہ ضلع کونسل کوھاٹ میں مالی سال 2019-20 کا بجٹ پیش کرنے کے موقع پر ایوان سے خطاب کر رہے تھے انہوں نے کہا کہ سڑکوں پر بے ہنگم ٹریفک کے دباؤ‘ پارکنگ کی عدم سہولیات‘ شہر میں پانی کا بڑھتا ہوا بحران‘ صحت کے اداروں میں محدود سہولیات‘ لوڈشیڈنگ‘ سرکاری اداروں میں احساس ذمہ داری اور جوابدہی کے کلچر کا فقدان وہ بنیادی مسائل ہیں جن کی وجہ سے عوام میں مایوسی بڑھ رہی ہے ان کا کہنا تھا کہ محدود وسائل اور دیگر ادارون کی مدد سے دیہی مراکز صحت میں نئی سہولیات فراہم کیں نئی عمارات بنوائیں بجلی سے محروم علاقوں کو یہ سہولیات فراہم کی خراب ٹرانسفارمرز کے لیے فنڈز مہیا کیے نادار اور خصوصی افراد میں وہیل چیئرز اور سلائی مشینیں تقسیم کیں آبنوشی و نکاسی آب کے بے شمار منصوبے مکمل کیے سکولوں میں اساتذہ کی کمی دور کی سکولوں کو سہولیات دیں اور نئی عمارات بنوائیں اور تفریحی مقاصد کے لیے مختلف ٹورنامنٹس منعقد کرائے جو ہماری کارکردگی کا منہ بولتا ثبوت ہے پریذائیڈنگ آفیسر عبدالرشید نے کہا کہ یہ اس ایوان کی خوش قسمتی ہے کہ چار سال میں پانچ بجٹ ہم نے پیش کیے موجودہ بجٹ میں کوشش کی جائے گی کہ زیر تکمیل منصوبوں کو جلد از جلد تکمیل تک پہنچایا جائے بجٹ کے حوالے سے اراکین کونسل ساجد اقبال‘ دلبر خان ایڈووکیٹ‘ محمد اقبال شاہ پور‘ حاجی محمد فہیم اور اپوزیشن لیڈر الحامد نے بھی اظہار خیال کیا۔