غیر ملکی درسگاہیں افغانیو ں کی مدد کریں :کرزئی

غیر ملکی درسگاہیں افغانیو ں کی مدد کریں :کرزئی
غیر ملکی درسگاہیں افغانیو ں کی مدد کریں :کرزئی

  


کابل(مانیٹرنگ ڈیسک)افغان صدر حامد کرزئی نے عالمی برادری سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ افغانستان میں اعلیٰ تعلیم کے شعبے میں مزید تعاون کرے تاکہ تعمیر و ترقی میں ملکی افراد کی قابلیتوں سے استفادہ کیا جائے۔ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کرزئی نے خیال ظاہر کیا کہ غیر ملکی فوجیوں اور ماہرین کے جانے کے بعد وہاں پیدا ہونے والے خلاء کو اعلیٰ تعلیم یافتہ اور ہنرمند افراد سے پورا کرنے کے لیے اعلیٰ تعلیم کے شعبے میں تیز رفتار اصلاحات کی ضرورت ہے۔ گزشتہ تقریباً 30 برسوں سے حالت جنگ میں رہنے والے افغانستان میں تعلیم کا شعبہ بری طرح متاثر ہوا ہے اور وہاں اعلیٰ تعلیم کے لیے مناسب اور زیادہ تعداد میں درس گاہیں موجود نہیں ہیں۔ مسلسل حالت جنگ میں رہنے کی وجہ سے افغانستان میں تعلیم کے شعبے پر شدید منفی اثرات مرتب ہوئے ہیں۔ حامد کرزئی نے مطالبہ کیا کہ ادویات اور انجینئرنگ کے شعبوں میں تعلیم کے لیے انگریزی اور جرمن زبان استعمال کی جائے۔ انہوں نے غیر ملکی درسگاہوں کو دعوت دی کہ وہ افغان عوام کے لیے کام کریں ۔

مزید : بین الاقوامی