بیرونی قوتیں پاکستان میں سیکولر نظام تعلیم مسلط کرنے کیلئے سرمایہ خرچ کر رہی ہیں،نوید قمر

بیرونی قوتیں پاکستان میں سیکولر نظام تعلیم مسلط کرنے کیلئے سرمایہ خرچ کر رہی ...

لاہور(نمائندہ خصوصی )جماعۃ الدعوۃ شعبہ تعلیم کے مدیر انجینئر نوید قمر نے کہا ہے کہ بیرونی قوتیں پاکستان میں سیکولر نظام تعلیم مسلط کرنے کیلئے بے پناہ سرمایہ خرچ کر رہی ہیں۔ تعلیم کے نام پر کلچر بدلنے کی خوفناک سازشیں کی جا رہی ہیں۔ جماعۃ الدعوۃ نے نصاب تعلیم اور اساتذہ کی تربیت کیلئے باقاعدہ ادارے قائم کئے ہیں۔ الدعوۃسکولز میں دینی تعلیم کے ساتھ ساتھ بچوں کو انگریزی اور کمپوٹر کی تعلیم بھی دی جاتی ہے۔ تعلیمی نظام میں تبدیلیاں کروانا امریکی گلوبلائزیشن اوراس کے نیو ورلڈ آرڈر کا حصہ ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے جماعۃ الدعوۃ شعبہ تعلیم کے ذیلی ادارہ فیل )فاوٗنڈیشن آف ایفیکٹو ایجوکیشن اینڈ لرننگ)کے زیر اہتمام افتخار اکیڈمی ضرار شہید روڈ کینٹ میں ورکشاپ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ورکشاپ میں پچاس کے قریب سکولوں کے پرنسپل و اساتذہ نے شرکت کی۔ انجینئر نوید قمرنے کہا کہ غیر ملکی این جی اوز کے زیر انتظام چلنے والے تعلیمی ادارے معاشرے میں فساد پھیلانے کا سبب بن رہے ہیں۔ نوجوان نسل کو دین اسلام سے برگشتہ کرنے کیلئے فحاشی و عریانی پھیلانے کی سازشیں کی جارہی ہیں۔ معاشرے کی صحیح اصلاح کیلئے دینی تعلیم کی اشد ضرورت ہے۔انہوں نے اس بات کو واضح کیاکہ بچوں کو پر اعتماد کیسے بنایا جا سکتا ہے۔اور کون کون سے اسباب ہیں۔جن سے بچوں میں اعتماد کی نمایاں کمی واقع ہوتی ہے۔اسی طرح انہوں نے بچوں کی نفسیات پر بڑی تفصیل سے روشنی ڈالی۔انہوں نے کہا کہ ہمیں دوران تدریس بچوں کی نفسیات اور ذہانت کو مد نظر رکھنا چاہئے تاکہ ہمارا تدریسی عمل مؤثر ہو۔اس کے علاوہ انہوں نے شرکاء کو اس بات کی طرف بھی متوجہ کیا کہ دنیا میں پیدا ہونے والاہر بچہ ذہین ہوتا ہے لیکن اس کی ذہانت کا میدان مختلف ہو سکتا ہے۔اس لئے بچے کو اس کی ذہانت کے مطابق تعلیم چاہئے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1