حالات کا تقاضا ہے ملک میں جمہوری عمل جاری رہے، گیلانی

حالات کا تقاضا ہے ملک میں جمہوری عمل جاری رہے، گیلانی

ملتان(آن لائن)سابق وزیراعظم اور پیپلز پارٹی کے مرکزی وائس چیئرمین سید یوسف رضا گیلانی نے کہا ہے کہ ملک کو اندرونی اور بیرونی خطرات کا سامنا ہے اور حالات کا تقاضا ہے کہ ملک میں جمہوری عمل جاری رہے تاکہ پاک فوج دہشتگردوں کیخلاف جاری آپریشن ضرب عضب میں سو فیصد کامیابیاں حاصل کرسکیں ۔ان خیالات کااظہار انہوں نے آن لائن سے ٹیلی فونک گفتگو کرتے ہوئے کہی ۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں جمہوریت مضبوط ہوگی تو ملک کی معیشت بھی مستحکم ہوگی جس سے نہ صرف ملک ترقی کرے گا بلکہ عوام میں بھی خوشحالی آئے گی انہوں نے کہا کہ جیسے جمہوریت ملک کی بقا کی ضامن ہے ویسے ہی پاک فوج بھی ملک کی سرحدوں کی حفاظت کی ضامن ہے اور پاک فوج کی تاریخ ہے کہ اس نے ہمیشہ ملک کو درپیش بحرانوں قدرتی آفات ، سیلابوں اور نامناسب حالات میں ملک اور قوم کی خدمت کی ہے انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ پیپلز پارٹی کی حکومت کو یہ اعزاز حاصل ہے کہ اس نے پہلی مرتبہ اپنی آئینی مدت پوری کی اور جمہوری طریقے سے انتقال اقتدار کی منتقلی کی انہوں نے کہا کہ سابق وزیراعظم شہید بے نظیربھٹو نے ماضی کے آمروں کی عطا کی ہوئی صورتحال کو مدنظر رکھتے ہوئے مفاہمت کی سیاست کو متعارف کروایا اور پھر میثاق جمہوریت کیا جس پر ملک کی اکثر سیاسی جماعتوں نے اتفاق کرتے ہوئے دستخط کئے اور اس ہی میثاق کو مدنظر رکھتے ہوئے پیپلز پارٹی نے موجودہ حکمرانوں سے مفاہمت کی پالیسی اپنائی اور ماضی کی سیاست کو خیر باد کہا جبکہ مسلم لیگ (ن) والوں نے ہمارے دور اقتدار میں لوڈ شیڈنگ پر شدید احتجاج کیا اور دعوے کئے کہ وہ اقتدار میں آکر دو سال میں ملک سے لوڈ شیڈنگ ختم کردینگے مگر آج بھی لوڈ شیڈنگ کے با عث عوام مررہے ہیں اور حکمران سکھ چین کی بانسری بجا رہے ہیں انہوں نے کہا کہ عوام کے مسائل پر آواز اٹھانا پیپلز پارٹی اور اپوزیشن کی آئینی ذمہ داری ہے جو ہم پوری کرتے رہیں گے انہوں نے مزید کہا کہ ملک میں جمہوریت پھلے پھولے اور اب کبھی جمہوریت ڈی ریل نہ ہو ورنہ ملک کو شدید خطرات لاحق ہوسکتے ہیں

گیلانی

مزید : علاقائی