امریکی کانگریس میں پاکستان کا نان نیٹواتحادی درجہ ختم کرنے کی قرارداد پیش

امریکی کانگریس میں پاکستان کا نان نیٹواتحادی درجہ ختم کرنے کی قرارداد پیش
امریکی کانگریس میں پاکستان کا نان نیٹواتحادی درجہ ختم کرنے کی قرارداد پیش

  

واشنگٹن (ڈیلی پاکستان آن لائن)امریکی کانگریس میں پاکستان کا نان نیٹو اتحادی کا درجہ ختم کرنے کا بل پیش کر دیا گیا ہے۔ یہ بل کانگریس کے دو اہم اراکین ری پبلکن ٹیڈپو اور ڈیمو کریٹک رک نولن نے پیش کیا۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق پاکستان کے نان نیٹو اتحادی کے رتبے سے خائف اراکین ٹیڈپو اور رک نولن نے اپنے بل میں الزام عائد کیا ہے کہ پاکستان دہشت گردی کے خلاف جنگ میں معادن اتحادی ثابت نہیں ہوا، بل کی حمایت میں کانگریس کے دیگر چار ارکان بھی سامنے آئے ہیں۔

ٹیڈپو جو کہ خارجہ امور کمیٹی کے رکن اوردہشت گردی پر ذیلی کمیٹی کے چیئرمین بھی ہیں،ان کے مطابق اسامہ بن لادن کو پناہ دینے سے لے کر طالبان کی حمایت تک پاکستان دہشت گردی کے خلاف جنگ میں معاون اتحادی ثابت نہیں ہوا۔ رک نولن نے الزام لگایا ہے کہ پاکستان نے امریکی خیرسگالی کا ناجائز فائدہ اٹھایا۔بل میں تجویزپیش کی گئی ہے کہ پاکستان کی امداد روک لی جائے یاکم ازکم امریکی اسلحے تک اس کی رسائی روکی جائے۔

واضح رہے کہ پاکستان کو نان نیٹو اتحادی کا درجہ 2004 میں دیا گیا تھا، جس کے بعد پاکستان امریکی دفاعی سازوسامان اورقرضوں کی ترجیحی بنیادوں پر حصول کا اہل ہو گیا تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -