اسلام آباد چیمبرمیں وسائل کی بندربانٹ کا نوٹس لیا جائے، یونایئٹڈگروپ

اسلام آباد چیمبرمیں وسائل کی بندربانٹ کا نوٹس لیا جائے، یونایئٹڈگروپ

اسلام آباد (این این آئی)اسلام آباد چیمبرکے یونائیٹڈ گروپ نے کہا ہے کہ چیمبر پر ایک مافیا قابض ہے جو تمام اہم عہدے آپس میں بانٹ کر لوٹ مار کر رہے ہیں۔ صدور اور نائب صدور کی فہرست دیکھی جائے تو چیمبرمیں موروثی سیاست کھل کر سامنے آ جاتی ہے۔اس ادارے میں کروڑوں روپے کی گھپلے کئے ہیں جن کی تحقیقات کی جائیں۔یونائیٹڈ گروپ کے چئیرمین حبیب اللہ زاہدنے ایک اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حکومت اسلام آباد چیمبر کے گزشتہ دس سال کی آمدنی اور اخراجات کا آڈٹ کرے تو ہوشرباء تفصیلات کا انکشاف ہو گا۔اسلام آباد چیمبر پر قابض گروپ وفاداریاں خریدنے کے لئے ممبران کو تفریحی دورے اور دیگر فوائد دینے پر وسائل لٹاتے رہتے ہیں۔غیر ملکی دوروں میں ممبران سے پانچ لاکھ فی کس فیس لی جاتی ہے جس کا حسابات میں کوئی ذکر نہیں ہوتا۔بوگس دوروں کے زریعے ایسے افراد کو بھی باہر بھیجا جاتا ہے جو کبھی واپس نہیں آتے جو انسانی سمگلنگ ہے۔چیمبر مافیا نے ڈسپلے سینٹر کے پلاٹ پر پلازہ بنا کر کرائے پر دے دیا ہے جو ملک بھر کی کاروباری برادری سے ظلم ہے مگر اس پر سی ڈی اے خاموش ہے جو تعجب کی بات ہے۔چیمبر پراجارہ داری قائم رکھنے کے لئے مافیا نے بوگس ممبرشپ کی ہوئی ہے جس کی تحقیقات کی جائیں تو بہت سے ڈرائیوروں، مالیوں اور گھریلو ملازمین کے نام سامنے آئیں گے۔

اسلام آباد چیمبر میں بعض ایسے افراد کو رشتہ داریوں کی بنیاد پرلاکھوں روپے تنخواہ دی جا رہی ہے جنھیں کوئی دس ہزار روپے بھی ملازم نہ رکھے۔تمام قوانین کو بالائے طاق رکھتے ہوئے بعض ملازمین کو پچاس لاکھ تک رقم غیر قانونی طور پر ایڈوانس دی گئی ہے جس کی ریکوری کی کوئی صورت نہیں۔ اجلاس میں شاہد زمان شنواری، ملک ندیم، سرفراز مغل، عابد خان، زاہد قریشی اور دیگر تاجر رہنما بھی موجود تھے۔ انھوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ صورتحال کا نوٹس لیا جائے اور چیمبر کو کالی بھیڑوں سے پاک کیا جائے۔ 

مزید : کامرس


loading...