آندھی کے بعد ملتان میں بارش،ہر طرف جل تھل آج پھر برسات کا امکان

آندھی کے بعد ملتان میں بارش،ہر طرف جل تھل آج پھر برسات کا امکان

ملتان‘ ڈیرہ(سپیشل رپورٹر‘سٹاف رپورٹر‘ نمائندہ خصوصی) محکمہ موسمیات کے مطابق پاکستان کے بالائی اور وسطی علاقوں میں پری مون سون کی ہوائیں داخل ہوگی اور اسی دوران ایک(بقیہ نمبر55صفحہ12پر)

 مغربی ہواؤں کا سلسلہ بھی پاکستان کے بالائی اور مغربی اور وسطی علاقوں پر اثر انداز ہوگا جس کے زیر اثر پری مون سون ہواؤں مغربی ہواؤں کے ٹکراؤ سے پنجاب کے کچھ وسطی مغربی اور شمال مشرقی علاقوں میں شدید موسمی حالات پیدا ہو سکتے ہیں جس میں شدید آندھیاں موسلادھار بارشیں اور چند ایک مقامات پر ژالہ باری بھی ہو سکتی ہے بارش کا یہ سلسلہ منگل رات یا بدھ کی صبح تک جاری رہے گا۔ محکمہ موسمیات کے مطابق اگلے 48 گھنٹوں کے دوران پنجاب کے بیشتر علاقوں میں گرج چمک کیساتھ بارش کا امکان تاہم پنجاب کے وسطی مشرقی اور مغربی علاقوں میں شدید آندھیاں موسلادھار بارش ہو سکتی ہیں جس میں لیّہ کوٹ ادو نور پور تھل جھنگ ٹوبہ ٹیک سنگھ فیصل آباد چنیوٹ خوشاب سرگودھا گوجرانوالہ لاہور جہلم  کھاریاں منڈی بہاوالدین اسلام آباد راولپنڈی نارووال سیالکوٹ گجرات چکوال میاں والی ساہیوال پاکپتن بہاولنگر اوکاڑہ حافظ آباد بہاولپور چولستان کا علاقے  بھکر فتح پور چوک اعظم تونسہ ڈیرہ غازی خان مظفرگڑھ ملتان رحیم یار خان  کوہ سلیمان کے علاقے فورٹ منرو سخی سرور راجنپور شامل ہیں ان علاقوں میں گرج چمک کے ساتھ تیز بارش چند مقامات پر شدید موسمی حالات شدید آندھیاں آ سکتی ہیں۔ ملتان سمیت جنوبی پنجاب میں گزشتہ شب تیز آندھی کے ساتھ ہونے والی موسلادھار بارش سے ہرطرف جل تھل ہوگیا بارش سے گرمی اور حبس کا زور ٹوٹنے کے ساتھ ساتھ موسم خوشگوار ہوگیا ہے اس ضمن میں محکمہ موسمیات کے مطابق گزشتہ روز ملتان میں چلنے والی آندھی کی شدت 74کلومیٹرفی گھنٹہ ریکارڈ کی گئی جبکہ بارش کی شدت 10.2ملی میٹر ریکارڈ کی گئی مذکورہ آندھی اور بارش سے ہر طرف جل تھل ہوگیا اور شہر کی اہم شاہراہوں سمیت مضافاتی علاقوں میں پانی جمع ہوگیا جس سے شہریوں کو آمدورفعت میں شدید مشکلات کاسامنا کرنا پڑا۔دوسری جانب تیز آندھی سے آم کے باغات شدید متاثرہوئے ہیں اور ان کا کچا پھل ٹوٹ کرگیاہے۔محکمہ موسمیات نے آج بھی مزید بارش اور آندھی کی پیشگوئی کی ہے۔ مقامی محکمہ موسمیات کی پیشگوئی کے مطابق آئندہ چوبیس گھنٹوں کے دوران ملتان میں مطلع جزوی ابرآلود رہنے اور گرج چمک کے ساتھ آندھی چلنے اور ہلکی بارش کا امکان ہے گزشتہ روز ملتان میں زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 41.1اور کم سے کم30.0ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا جبکہ ہوا میں نمی کا تناسب صبح آٹھ بجے 61اور شام پانچ بجے 38فیصد رہا۔آج طلوع آفتاب5بجکر 12منٹ پر جبکہ غروب آفتاب 7بجکر20منٹ پر ہوگا۔ ڈائر یکٹر جنرل ایم ڈی اے کی ہدایت پر ایم ڈی واسا نے گزشتہ شب  ہونے والی موسلا دھار بارش کے بعد واسا میں ایمرجنسی نافذ کردی ہے،  منیجنگ ڈائریکٹر واسا  راؤمحمد قاسم نے تمام سیوریج، ڈسپوزل سٹیشنوں پر ہائی الرٹ جاری کرتے ہوئے افسران اور فیلڈ سٹاف کو طلب کر لیا۔ سیوریج ڈویژنوں کے افسران کو اپنے اپنے فیلڈ سٹاف کو ہنگامی بنیادوں پر گھروں سے بلوا کر  بارش کے پانی کی نکاسی کے لئے متحرک کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے تمام ڈسپوزل سٹیشنوں کو بھی فل کپیسٹی پر چلانے کا حکم جاری کر دیا گیا۔ایم ڈی واسا نے ہدایت کی ہے کہ شہر بھر سے بارش کی پانی کی نکاسی تک تمام افسران فیلڈ میں اپنی حاضری کو یقینی بنائیں۔ادھر تیز آندھی اور بارش کے پیش نظر ڈپٹی کمشنر عامر خٹک نے واسا،میونسپل کارپوریشن،ریسکیو1122 اور محکمہ صحت کو کسی بھی قسم کی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لیے چوکس رہنے کا حکم دیا ہے ڈپٹی کمشنر عامر خٹک نے واسا اور میونسپل کارپوریشن حکام کو ہدایت کی ہے کہ وہ ایسے مقامات جہاں بارش کا پانی جمع ہو کر لوگوں کی آمدورفت میں روکاوٹ کا باعث بنتا ہے ان مقامات سے پانی کے بلاتاخیر نکاس کو یقینی بنائیں تمام مشینری کو آپریشنل کر کے  عملہ کو فیلڈ میں بھیجیں افسران خود بھی فیلڈ میں رہیں ریسکیو 1122ایمرجنسی کی صورت میں فوری ریسپانس دے اور محکمہ صحت علاج معالجہ کی تمام تر سہولیات کا بندوبست رکھیں تمام اسسٹنٹ کمشنر اپنی تحصیلوں میں چوکس رہیں۔ ملتان اور گردونواح میں موسلا دھار بارش سے میپکو کے ترسیلی نظام کو نقصان پہنچا۔متعدد فیڈرزٹرپ کرگئے جس سے وسیع علاقے میں بجلی کی فراہمی بند ہو گئی۔ مختلف علاقوں میں بجلی کی تاریں ٹوٹنے‘ پولز گرنے اور ٹرانسفارمرز و میٹرز جلنے کی اطلاعات موصول ہوئیں۔ بجلی کی بندش کے باعث شہری مشکلات کا شکار ہو گئے۔ نواحی علاقوں میں تو بری صورتحال رہی جہاں وسیع علاقے اندھیرے میں ڈوب گئے۔ ڈیرہ میں  تیز ھواکے ساتھ موسلادھار بارش سے ندی نالے بھرنے سے پانی سڑکوں پر بارش شروع ہوتے ہی میپکو نے بھی اپنی فرض شناسی میں دیر نہیں کی سول لائن سمیت متعدد فیڈرز کی بجلی بند،بجلی کی بندش کے باعث واٹر سپلائی اور سیوریج ٹربائن بھی نہ چلائی جاسکیں تاھم موسلا دھار بارش نے شہر بھر کوجل تھل کردیا جس سے گرمی کازور بھی ٹوٹ گیا گرمی کے مارے شہریوں کے چہرے کھل اٹھے بارش ہلکی ھوتے ہی شہری بھی دیوانہ وار سڑکوں پر نکل آئے تاھم بجلی کی بندش کے باعث لوگوں کو آمدورفت میں شدید مشکلات کا سامناکرناپڑا ادھر محکمہ موسمیات نے مزید بارشوں کی پیش گوئی کرتے ھوئے خبردار کیا ھے کہ پنجاب میں جولائی اور اگست کے دوران ھونے والی شدید بارشوں کے نتیجے میں سیلاب کاخطرہ موجود ھے۔ گزشتہ روزملتان  اورنواح میں ہونے والی بارش کے باعث ریلوے کاجدیدسگنل سسٹم بری طرح متاثرہوازرائع کے مطابق سی بی ائی سسٹم کے لودھراں ملتان کے درمیان موجودسگنل ٹریک میں بارش کی وجہ سے ریڈ ہوگئے جس کے بعدتمام ٹرینوں کوپیپرلائن کلیئرکے تحت چلایاگیابتایاجاتاہے کہ ریلوے ٹریک میں بارش کے پانی سے پیداہونے والی نمی خشک ہونے پرسسٹم خودہی ٹھیک ہوجائے گا۔ ڈویژنل ریلوے انتظامیہ نے محکمہ موسمیات کی طرف سے آئندہ دوروزتک بارشوں کی پیش گوئی کومدنظررکھتے ہوئے ٹرین آپریشن کومحفوظ طورپرجاری رکھنے کے لئے احکامات جاری کردئیے ہیں شعبہ سول انجنیئرنگ سٹاف سے کہاگیاہے کہ وہ ریلوے ٹریک میں کسی بھی مقام پربارش کاپانی کھڑانہ ہونے دیں اسی طرح ٹرین ڈرائیورز،ٹرین گارڈزکوبھی خصوصی ہدائت دی گئی ہے کہ وہ ٹرین کی رفتارکوکنٹرول میں رکھیں بغیرٹیل لیمپ کے مال برداریامسافرگاڑی کوہرگزنہ چلایاجائے۔ٹریک کی صورت حال سے ڈویژنل کنٹرول روم کوفوری طورپرآگاہ کیاجائے۔ شعبہ سینٹیشن کی غفلت کے باعث کنٹونمنٹ بوڑد کے زیرانتظام لوئرکلاس اورمڈل کلاس علاقوں میں گزشتہ روزہونے والی بارش کے بعدکئی کئی فٹ پانی کھڑارہاشعبہ سینٹیشن نے کینٹ کے پوشش علاقوں سے بارش کاپانی نکال کرسب اچھاکی رپورٹ دے دی۔بتایاجاتاہے کہ کینٹ بورڈ کے زیرانتظام لوئراورمڈل کلاس علاقوں لال کرتی،جمیل آبادوارڈنمبر1،کنک منڈی،کھٹکانہ،سمیت دیگرعلاقوں میں پوشش علاقوں کی نسبت سہولیات کافقدان ہے کینٹ بورڈ کے افسروں سمیت صفائی ستھرائی کاعملہ بھی ان علاقوں پرتوجہ دینے کوتیارنہیں گزشتہ روزہونے والی بارش کے بعد شعبہ سینٹیشن کے سٹاف،سینٹری انسپکٹر اورشکائیات سیل کی نکاسی آب کے حوالے سے تمام ترتوجہ پوشش علاقوں گلبرک سٹریٹ،ڈیفنس آفیسرکالونی،عسکریہ کالونی ون،ٹو،بنگلہ نمبر،قائداعظم روڈبنگلہ نمبرپانچ،چھ،جمیل آبادوارڈنمبردوپررہی جبکہ لوئراورمڈل کلاس علاقوں کومکمل طورپرنظراندازکردیاگیا

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...