ڈیرہ غازیخان چڑیا گھر‘ ڈلیوری کے دوران  شیرنی جان کی بازی ہار گئی‘ پوسٹمارٹم کے بعد کھال  محفوظ‘ وزیٹرز کا اظہار تشویش‘ تحقیقات کا مطالبہ

ڈیرہ غازیخان چڑیا گھر‘ ڈلیوری کے دوران  شیرنی جان کی بازی ہار گئی‘ ...

ڈیرہ غا زی خان (نمائندہ خصوصی) وائلڈ لائف پارک،چڑیا گھر ڈیرہ غازی خان میں دو مرتبہ بچے جنم دینے والی شیرنی تیسری مرتبہ ڈلیوری ہو نے کے دوران جان کی بازی ہار گئی پوسٹ (بقیہ نمبر53صفحہ12پر)

مارٹم کے بعد کھال محفوظ کر لی گئی،تفصیلات کے مطابق ڈیرہ غازی خان کے چڑیا گھر میں شیر اور شیرنی کا جوڑا موجود تھا نوجوان شیرنی نے گزشتہ ڈیڑھ سال کے دوران دو مرتبہ بچوں کو جنم دیا جو کہ چڑیا گھر انتظامیہ کے مطابق پری میچور ڈلیوری کی وجہ سے جانبر نہ ہو سکے تھے اب شیرنی کی تیسری مرتبہ ڈلیوری تھی۔ ذرائع کے مطابق دوران ڈلیوری مختلف پیچیدگیوں کی وجہ سے مردہ بچہ جنم دینے کے بعد خود بھی جان کی بازی ہار گئی جس کا محکمہ لائیوسٹاک کے عملہ نے گزشتہ روز پوسٹ مارٹم کیا جس کے بعد شیرنی کی کھال محفوظ کر لی گئی جبکہ اس کی باقیات کو دفن کر دیا گیا چڑیا گھر میں شیرنی کی موت پر وزیٹر،گل زمان،محمد نعیم،محمد نعمان،ارسلان زاہد،محمد شارق اور دیگر نے شدید رد عمل ظاہر کر تے ہو ئے اس کی موت کی تحقیقات کر کے غفلت کے مر تکب اہلکاروں کے خلاف کاروائی کی جائے اور کہا کہ چڑیا گھر میں ہاتھی سمیت دیگر جانوروں کا اضافہ کیا جا ئے اس سلسلہ میں مزید صورتحال جاننے کے لئے ڈپٹی ڈائریکٹر وائلڈ لائف خورشید اعظم قیصرانی سے رابطہ کیا گیا تو انہوں نے شیرنی کی موت کی تصدیق کر تے ہو ئے بتایا کہ شیرنی کی تیسری مرتبہ ڈلیوری تھی جس کے نتیجہ میں ایک مردہ بچے کو جنم دیا جبکہ مزید بچہ بھی اس کے پیٹ میں تھا ڈلیوری میں پیچیدگیوں کے باعث شیرنی کی موت واقع ہو گئی تاہم پوسٹ مارٹم رپورٹ آنے پر اصل موت کی وجہ کا پتہ چل سکے گا۔

تحقیقات

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...