موجودہ نظام میں بھتہ لینا آسان، ٹیکس لینا مشکل ہے، انوار الحق کاکڑ

موجودہ نظام میں بھتہ لینا آسان، ٹیکس لینا مشکل ہے، انوار الحق کاکڑ

اسلام آباد (این این آئی)بلوچستان عوامی پارٹی (بی اے پی) کے رہنما اور سینیٹر انوار الحق کاکڑ نے کہاہے کہ موجودہ نظام میں بھتہ لینا آسان، ٹیکس لینا مشکل ہے۔ ایک انٹرویومیں انوارالحق کاکڑ نے کہا کہ سیاسی جماعتوں نے خوف کو ہتھیار بنا کر اپنے لیے استعمال کیا اور پھر اسے سیاسی کلچر کا حصہ بنادیا ہے۔انہوں نے کہاکہ جنوبی ایشیاء میں ایک بڑا سماجی مسئلہ ہے کہ یہاں طبقات سے سلوک ان کے درجے کی بنیاد پر ہوتا ہے۔انوارالحق کاکڑ نے کہا کہ پارلیمنٹ میں ہر طبقے کی نمائندگی کو یقینی بنانے کی کوشش(بقیہ نمبر12صفحہ12پر)

 ہونی چاہیے، ایم کیو ایم نے نچلی سطح کے لوگوں کو موقع دیا لیکن اس سے اس طبقے کے مسائل حل کرنے کے بجائے ان میں اضافہ کیا۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے تجویز دی کہ جنہوں نے انتخاب کرنا ہے اور جن کا انتخاب ہونا ہے ان کے لیے کوئی بنیادی معیار مقرر کیا جانا چاہیے کیونکہ جنہوں نے قوم کی تقدیر کا فیصلہ کرنا ہوتا ہے ان سے متعلق بھی کھ شرائط کا ہونا ضروری ہے۔رہنما بلوچستان عوامی پارٹی نے کہا کہ نوجوان قیادت اپنی الگ شناخت بنائے اور اپنے بڑوں کی غلطیوں کو بھی تسلیم کرے تو عوام ان کے پیچھے چل پڑیں گے۔انہوں نے کہاکہ معاشرہ، خاندان اور ملک شہری کی تعلیم و تربیت میں اپنا کردار ادا کرے سب بدل جائے گا۔

انوار الحق کاکڑ

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...