چنائی میں پانی کا بحران”واٹر ٹرینیں“ چلانے کا فیصلہ

  چنائی میں پانی کا بحران”واٹر ٹرینیں“ چلانے کا فیصلہ

چنائی (اے پی پی)  جنوبی بھارتی ریاست تامل ناڈو کے دارالحکومت اور ملک کے چھٹے سب سے بڑے شہر چنائی کو اس وقت پانی کے شدید بحران کا سامنا ہے۔ بھارت میں کار سازی کی صنعت کے مرکز اس شہر کی پیاس بجھانے کے لیے اب ”واٹر ٹرینیں“ چلائی جائیں گی۔ شہر کو اس وقت پانی کے اس قدر شدید بحران کا سامنا ہے کہ حکام نے ایک ایسے وقت پر، جب گرمیوں کا موسم اپنے عروج پر ہے، اس شہر میں پانی کی قلت کو پورا کرنے کے لیے ایک ہنگامی اجلاس میں چنائی کے لیے پانی کے ٹینکروں سے لدی خصوصی ریل گاڑیاں چلانے کا فیصلہ کیا ہے۔ اب ریاست کے دیگر حصوں سے واٹر ٹینکروں سے لدی ایسی ریل گاڑیاں چنائی کی طرف چلائی جائیں گی جو مجموعی طور پر روزانہ 10ملین لٹر تک پانی اس شہر میں پہنچائیں گی۔ یہ ٹرینیں پانی ویلور شہر سے ٹینکروں میں چنائی پہنچائیں گی۔گزشتہ برس بھارتی حکومت کی طرف سے جاری کردہ ایک سرکاری رپورٹ کے مطابق جنوبی ایشیا کے اس ملک کو اس کی تاریخ کے پانی کے بدترین بحران کا سامنا ہے۔

اور 600 ملین شہری (پوری یورپی یونین کی آبادی سے بھی زیادہ) ایسے تھے جنہیں ”بہت زیادہ سے لے کر انتہائی حد تک“ پانی کی کمی کا سامنا تھا۔ اس رپورٹ میں یہ بھی کہا گہا تھا کہ بھارت میں ہر سال تقریباً 2 لاکھ تک انسان پینے کے صاف پانی تک ناکافی رسائی کے باعث موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں۔

مزید : عالمی منظر


loading...