جندول‘ پاکستانی شہری کا بلاک  شناختی کارڈ کے اجراء کا مطالبہ

جندول‘ پاکستانی شہری کا بلاک  شناختی کارڈ کے اجراء کا مطالبہ

جندول(نمائندہ پاکستان) غربت اور بے روزگار ی میں زندگی گذارنے والے تحصیل ثمرباغ گاوں اشاڑکوڑ بالا کے رہائشی پاکستا نی مذدور کارشہری نے وزارت داخلہ سے بلاک شناختی کارڈ کے اجراء کا مطالبہ کیا ہے۔ میڈیاں کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے نذیر باچا ولد نورزادہ خان شناختی کارڈ نمبر15303-2241885-3کا کہنا تھا کہ2014میں کراچی میں محنت مذدوری کی غرض سے مقیم ہونے کی وجہ سے اس نے کراچی ڈیفنس اختر کالونی کے نادراء میں شناختی کارڈ کے تجدید کیلئے داخلہ کیاتھا جہاں اس کا شناختی کارڈ بلاک ہوا۔اس کا کہنا تھا کہ بعد ازاں انہوں نے وہاں بورڈ بھی کرایا مگر نتائج برآمد نہ ہونے کی وجہ سے وہ اپنے گھر چلا آیا اور ثمرباغ نادراء میں دوبارہ شناختی کارڈ کیلئے داخلہ کیا تاہم وہاں بھی شناختی کارڈ نہیں آیا جس کے بعد اسے وزارت داخلہ سے نوٹس موصول ہوا کہ تمہارا شناختی کارڈ غلط اندراج کی وجہ سے بلاک کیا گیا ہے جس کے بعد میں نے نادراء حکام کے کہنے پر دو مرتبہ ویری فیکیشن بورڈ کرایا اور اپنے پاکستانی ہونے کے ثبوت انہیں فراہم ئے مگر تا حال میر شناختی کارڈ بلاک پڑا ہے۔انہوں نے کہا کہ وہ بال بچہ دار شخص ہے اور شناختی کارڈ نہ ہونے کی وجہ سے گھر میں بے روزگار بیٹھے رہنے کی وجہ سے قروض ہو چکا ہے۔ انہوں نے وزارت داخلہ سے جلد از جلد انکوائری اور شناختی کارڈ کے اجراء کا مطالبہ کیا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...