بی این پی مینگل کی ڈاکٹر شہناز بلوچ نے اخلاقیات کی وزارت بنانے کی تجویز دیدی

بی این پی مینگل کی ڈاکٹر شہناز بلوچ نے اخلاقیات کی وزارت بنانے کی تجویز دیدی

اسلام آباد (این این آئی) بی این پی مینگل کی ڈاکٹر شہناز بلوچ نے کہاہے کہ اخلاقیات کی وزارت بننی چاہیے جو اخلاقیات سکھائے۔قومی اسمبلی کے بجٹ اجلاس میں بی این پی مینگل کی ڈاکٹر شہناز بلوچ نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہاکہ پہلے 6 نکات پھر 12 نکات پر ہمارے ساتھ بات ہوئی،ہم بلوچستان کے صرف 20 ارکان ہیں شور کریں گے تو بھی کیا ہوگا؟۔ انہوں نے کہاکہ بڑے بڑے پراجیکٹس کے بجائے لوگوں کو زندہ رکھیں ان کو پینے کا پانی دیں۔ انہوں نے کہاکہ 70 سال میں ہم نے لوگوں کو کہاں لاکر کھڑا کردیاہے۔ انہوں نے کہاکہ ہم سب مجرم ہیں جنہوں نے ملک کو اس حد تک گرادیا کہ ہر چیز کو گروی رکھا جارہا ہے۔انہوں نے کہاکہ سب سے زیادہ خواتین میں شرح اموات بلوچستان میں ہے۔ انہوں نے کہاکہ پینے کے پانی کے لیے کمیشن بنائیں تاکہ مسئلے کا حل نکالا جائے۔ انہوں نے تجویز دی کی کہ اخلاقیات کی وزارت بننی چاہیے جو اخلاقیات سکھائے۔

تجویز

مزید : علاقائی


loading...