سعودی عدالت نے پاکستانی شہری اور اس کے کفیل پر بھاری جرمانہ عائد کردیا، اور وہ بھی ایسا کام کرنے پر جو سعودی عرب میں بہت سے پاکستانی کرتے ہیں

سعودی عدالت نے پاکستانی شہری اور اس کے کفیل پر بھاری جرمانہ عائد کردیا، اور ...
سعودی عدالت نے پاکستانی شہری اور اس کے کفیل پر بھاری جرمانہ عائد کردیا، اور وہ بھی ایسا کام کرنے پر جو سعودی عرب میں بہت سے پاکستانی کرتے ہیں

  


جدہ(مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی عرب میں ایک پاکستانی شہری اور اس کے سعودی کفیل کو عدالت نے بھاری جرمانے کی سزا سنا دی ہے۔ ان دونوں کو ایسا کام کرنے پر یہ سزا سنائی گئی جو اکثر پاکستانی سعودی عرب میں کرتے ہیں۔ سعودی گزٹ کے مطابق تارکین وطن سعودی شہریوں کے نام سے وہاں اپنا کاروبار شروع کر لیتے ہیں اور بدلے میں ان سعودی شہریوں کو ماہانہ مخصوص رقم دیتے رہتے ہیں۔ یہ پریکٹس سعودی عرب میں غیر قانونی ہے۔

اس پاکستانی شہری نے بھی جدہ میں کمپیوٹر اسیسریز اور سٹیشنری سٹور کھول رکھا تھا۔ اس سٹور کی رجسٹریشن اس پاکستانی شہری کے سعودی کفیل کے نام پر تھی تاہم اس کا اصل مالک پاکستانی شہری تھا۔ عدالت میں یہ بات ثابت ہونے پر انہیں 4لاکھ ریال (تقریباً 1کروڑ 67لاکھ روپے)جرمانے کی سزا سنا دی گئی۔رپورٹ کے مطابق ان دونوں کے اس فراڈ کی مخبری ایک سعودی شہری نے کی تھی۔ سعودی وزارت محنت کی طرف سے جرمانے کی رقم کا 30فیصد اس شخص کو انعام کے طور پر دیا گیا ہے۔

مزید : عرب دنیا