کیا شرعی طور پر دوسری شادی کیلئے پہلی بیوی کی اجازت ضروری ہے؟ چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل بھی میدان میں آگئے

کیا شرعی طور پر دوسری شادی کیلئے پہلی بیوی کی اجازت ضروری ہے؟ چیئرمین اسلامی ...
کیا شرعی طور پر دوسری شادی کیلئے پہلی بیوی کی اجازت ضروری ہے؟ چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل بھی میدان میں آگئے

  


اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) چیئر مین اسلامی نظریاتی کونسل قبلہ ایاز نے کہاہے کہ دوسری شادی کیلئے پہلی بیوی سے اجازت لینا شرعی طور پر ضروری نہیں ہے ۔

دنیا نیوز کے پروگرام ”نقطہ نظر“میں گفتگو کرتے ہوئے قبلہ ایاز نے کہا کہ شریعت میں دوسری شادی کرنے کیلئے پہلی بیوی سے اجازت لینے کی ضرورت نہیں ہے لیکن قانون کے مطابق بیوی سے اور مصالحاتی کمیٹی سے اجازت لینا ضروری ہے اور اگر اسکی خلاف ورزی ہوئی تو سزا اور جرمانہ تو ہوگا لیکن دوسری شادی برقرار رہے گی ۔

انہوں نے کہا کہ دوسری شادی کیلئے پہلی بیوی سے شادی کی اجازت لینا قانونی ضرورت تو ہے لیکن شرعی ضرورت نہیں ہے ۔

خیال رہے کہ پیر کے روز اسلام آبادہائیکورٹ نے ایک کیس کا فیصلہ سناتے ہوئے حکم دیا تھا کہ دوسری شادی کیلئے نہ صرف پہلی بیوی کی اجازت حاصل کرنا ہوگی بلکہ مصالحتی کونسل سے بھی منظوری لینا ہوگی۔

مزید : قومی