وفاق کی طرح صوبائی بجٹ کا بھی حقیقت سے کوئی تعلق نہیں،ہمایون خان

وفاق کی طرح صوبائی بجٹ کا بھی حقیقت سے کوئی تعلق نہیں،ہمایون خان

  

پشاور(سٹی رپورٹر)پاکستان پیپلزپارٹی کے صوبائی صدر ہمایوں خان نے کہاہے کہ وفاق کی طرح صوبائی بجٹ کا بھی حقیقت سے کوئی تعلق نہیں کورونا نے عوام کو بری طرح متاثر کیا ہے مہنگائی میں اضافہ کا اعتراف خود حکومت بھی کر رہی ہے لیکن بدقسمتی سے حکومت عوام کو ریلیف دینے کی بجائے صرف سیاسی نعروں پر گزارہ کررہی ہے۔ان خیالات کااظہارانہوں نے سینیٹرروبینہ خالد کے ہمراہ پشاورپریس کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ہمایون خان نے کہاکہ 19تاریخ کے صوبائی بجٹ کو ہم الفاظ کاہیرپھیر سمجھتے ہیں وفاق اور صوبائی حکومت نے عوام دشمن بجٹ پیش کیاکورونا کی حالت میں حکومت کو بجٹ میں ریلیف دینا چاہیے تھاانہوں نے کہاکہ اشیائخودنودش کی قیمتوں میں آئے روز اضافہ ہو رہاہے آج کسی کو کورونا ہو جائے تب بھی وہ اسپتال نہیں جاتاوزیر اعظم عوام کے ساتھ لاک ڈاو ن کے نام پر مذاق کر رہے ہیں ہمایون خان نے کہاکہ نیب بی ار ٹی منصوبہ اورمالم جبہ کیس پر بھی خاموش ہے18ترامیم میں ردوبدل کرنے کیلئے دوتہائی اکثریت کی ضرورت ہوتی ہے جوکہ حکومت کے پاس نہیں اس موقع پر سینیٹرروبینہ خالد نے کہاکہ ہر سال بجٹ کی موٹی موٹی کتابیں چھپتی ہیں، آخرمیں پتہ چلتا ہے کہ بجٹ میں کیا ہے وزیر اعظم نے بازار اپنے پسند کے لوگوں کی خاطر کھولے چینی، پیٹرول کے بعد گندم کا بحران سر اٹھا رہا ہے غریب کے ساتھ ریلیف کے نام پر حکومت کھیل کھیل رہی ہے وزیراعظم نے جو سپوکر پرسنز رکھے وہ پریس کانفرس کر کے سندھ پر تنقید کرتے ہیں سندھ کے ہسپتالوں کا شمار دنیا کے اچھے اسپتالوں میں ہوتا ہے وفاق کو لیڈی ریڈنگ اسپتال کا حال دیکھنا چاہئے صوبے کے ہسپتال میں ڈاکٹر اور نرسز کی کوئی ٹریننگ نہیں انہوں نے کہاکہ اپنا گھر چھوڑ کر دوسروں میں بڑائی دیکھتے ہیں وزیر اعظم کو اپنا قبلہ دوست کرنا ہو گاآکسیجن کے سیلنڈر بازاروں میں نہیں مل رہے سرکاری اسپتالوں میں آکسیجن موجود نہیں اپنے صوبے کنٹرول نہیں ہوتے سندھ کا غم کرتے ہیں انہوں نے کہاکہ بجٹ میں تعلیم اور صحت کے فنڈز میں کٹوتی کی گئی آن لائن کلاسز چلا رہے ہیں لیکن فاٹا میں انٹرنیٹ سروسز ہی نہیں ہیں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -