سروسز ہسپتال کی سرجیکل ایمرجنسی  میں لواحقین کا ڈاکٹر پر تشدد

سروسز ہسپتال کی سرجیکل ایمرجنسی  میں لواحقین کا ڈاکٹر پر تشدد

  

لاہور (کرائم رپورٹر)سروسز ہسپتال کی سرجیکل ایمرجنسی میں لواحقین کا ڈاکٹر پر تشدد،تفصیلات کے مطابق ہسپتالوں میں ڈاکٹروں اور مریضوں کے لواحقین کے درمیان تلخ کلامی اور جھگڑے کے اکثر واقعات دیکھنے میں آئے ہیں، کہیں ڈاکٹرز کی مبینہ غفلت کی وجہ سے مریض جان کی بازی ہار جاتا ہے تو کہیں لواحقین اپنا غصہ ڈاکٹرز پر نکالتے نظرآرہے ہیں، ایک ایساہی واقعہ گزشتہ روزسروسز ہسپتال میں پیش آیا جہاں مریض کے لواحقین نے ڈاکٹر پر تشدد کیا، اطلاعات کے مطابق سروسز ہسپتال کی سرجیکل ایمرجنسی وارڈ میں مریض کے لواحقین احمد نامی شخص نے ایم ایل سی نہ بنانے کے معاملے پر ڈیوٹی ڈاکٹر کو سرعام تھپڑ دے مارا، ہسپتال انتظامیہ کا کہنا ہے کہ جاوید نامی مریض  گولی لگنے کے بعد سروسز ہسپتال آیا تھا جس کو ڈاکٹرز علاج کے بعد ڈسچارج کر رہے تھے جبکہ لواحقین کا ایم ایل سی بنانے پر اصرار اور 

دھمکیاں دینے پر معاملہ بگڑگیا،.پولیس نے ڈاکٹر کو تشدد کا نشانہ بنانے اور دھمکیاں دینے پر مقدمہ درج کر لیا ہے۔

ڈاکٹر پر تشدد

مزید :

صفحہ آخر -