بہاولپور، انتظامیہ کا شہریوں پر وار،27فلٹریشن پلانٹس بند

بہاولپور، انتظامیہ کا شہریوں پر وار،27فلٹریشن پلانٹس بند

  

بہاولپور (ڈسٹرکٹ رپورٹر) بہاولپور شہر کے 27 فلٹریشن پلانٹ بند ہو گئے بقیہ چلنے والے واٹر فلٹریشن پلانٹس کے فلٹرز تبدیل نہ ہونے کی وجہ شہری ریت ملا پانی پینے پر مجبور ہوگئے شہریوں چوہدری عبدالغفار رامے محمد سہیل لودھی عبدالرحمن محمد حسیب ایاز قریشی ملک سلیم جمال محمد یوسف رحیم شیر خان شیخ شاہین علی ملک محمد رمضان سمیت دیگر نے شہر کے صاف پانی کے تقریبا اطلاعات کے مطابق 27 فلٹریشن پلانٹس بغیر کسی وجہ کے بند کر دیئے گئے ہیں جبکہ جو بقیہ فلٹریشن (بقیہ نمبر46صفحہ7پر)

پلانٹس چل رہے ہیں انکی اوور ہالنگ و فلٹرز کی بروقت تبدیلی نہ ہونے کی وجہ سے شہری ریت ملا پانی پینے پر مجبور ہیں جسکی وجہ سے شہری متعدی امراض جن میں ہیپا ٹائٹس معدہ جگر آنت سمیت گردوں کے عارضہ میں مبتلا ہو رہے ہیں۔ شہریوں نے بتایا کہ محکمہ پبلک ہیلتھ کی واٹر ٹیسٹنگ لیبارٹری نے بھی بہاول پور شہر کے زیر زمین پانی میں آرسینک کی مقدار میں اضافے کا عندیہ دیا ہے۔ شہریوں نے الزام عائد کیا کہ میٹرو پولیٹن کارپوریشن اور کنٹونمنٹ بورڈ کے بعض اہلکاروں نے مقامی نجی پرائیویٹ منرل واٹر کمپنیوں سے مبینہ ساز باز کر رکھا ہے جسکی وجہ سے شہر کے اطلاعات کے مطابق 27 فلٹریشن پلانٹس بند کر دیئے گئے ہیں۔ شہریوں نے کمشنر و ڈپٹی کمشنر بہاول پور سمیت ایگزیکٹو آفیسر کنٹونمنٹ بورڈ سے صورتحال کا فی الفور نوٹس لیکر فلٹریشن پلانٹا کو دوبارہ چالو کرنے انکی اوورہالنگ سمیت فلٹرز کی مقررہ وقت پر تبدیلی کامطالبہ کیا ہے۔

پلانٹس بند

مزید :

ملتان صفحہ آخر -