کیا مریم اورنگزیب کے خلاف کوئی کارروائی ہوگی؟ شہباز گل نے سوال اٹھادیا، وجہ ایسی بتادی کہ آپ کو بھی حیرت ہوگی

کیا مریم اورنگزیب کے خلاف کوئی کارروائی ہوگی؟ شہباز گل نے سوال اٹھادیا، وجہ ...
کیا مریم اورنگزیب کے خلاف کوئی کارروائی ہوگی؟ شہباز گل نے سوال اٹھادیا، وجہ ایسی بتادی کہ آپ کو بھی حیرت ہوگی

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیراعظم کے معاون خصوصی ڈاکٹر شہباز گل نے مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے ایسا سوال کردیا ہے کہ سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر بھی سر پکڑ کر بیٹھ جائیں گے ۔

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی میں ن لیگی ترجمان مریم اورنگزیب نے دھواں دار تقریر کرتے ہوئے وزیراعظم کو کڑی تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ عمران خان نے ملک لوٹنے کے لئے زکوٹا جن رکھا ہوا ہے،عمران خان نے کہا تھا چہرے نہیں، نظام بدلوں گا، آج عمران خان نے نظام کی اینٹ سے اینٹ بجا دی ہے،یہ زکوٹا جن کا کمال ہے کہ جس نے سرکاری ملازمین کے میڈیکل بلوں پر 10 ارب روپے کا ٹیکس لگایا،جو چار سو ارب روپے کی چینی کھا گیا،122 ارب روپے کی ایل این جی کھا گیا،250 ارب کا آٹا کھا گیا ،1200 ارب کی کورونا ویکسین کھا گیا، 23 سو ارب زکوۃ فنڈ کے پیسے کھا گیا،پانچ سو ارب ادویات کے کھا گیا لیکن عمران خان کرپٹ نہیں ،نالائق نہیں ،جھوٹا نہیں نا اہل نہیں ،یہ سب زکوٹا جن کا کمال ہے ۔

ن لیگی ترجمان کی تقریر کےبعدڈاکٹرشہباز گل نےمائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ پر ٹویٹ کرتےہوئےکہاکہ مریم اورنگزیب نے اسمبلی کی تقریر میں سوشل میڈیا سے فگرز لے کر حکومت پر سینکڑوں ارب کے سکینڈلز گنوا دیے ،جھوٹ تو اُنہوں نے بولنا ہی ہے،کیا اسمبلی میں بھی اتنے کھلے جھوٹ بولنے کی اجازت ہے؟ بغیر کسی آفیشل فگرز کے؟ کیا اسمبلی میں جھوٹ بولنے پر کوئی کارروائی ہو گی ؟۔

ڈاکٹر شہباز گل نے اپنے دوسرے ٹویٹ میں کہاکہ مفرور نواز شریف کو عدالت نے بار بار بلایا لیکن وہ عدالت میں حاضر نہیں ہوئے،آج اسلام آباد ہائیکورٹ نے مفرور نواز شرف کی اپیل کی درخواست مسترد کر دی،آج نواز شریف اپنے کئے کی سزا پا رہے ہیں، انشاللہ ہر کرپٹ سیاستدان کا احتساب ہو گا،بھلے وہ کسی جماعت سے ہی ہو، پاکستان بدل چکا۔

ڈاکٹر شہباز گل نے اپنے تیسرے ٹویٹ میں پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز کے بیان کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ آپ کو بھی پتہ ہے پیسہ کون جمع کرواتا رہا اور عوام کو بھی آپ کی اصلیت روز بروز عیاں ہوتی جا رہی ہے، جس کسی کو ذرا بھی شک تھا اسے بھی واضح ہو گیا ہے کہ پپو، مستری مجید، فالودہ والے اور رمضان شوگر ملز کے غریب ملازمین کے نام پر کھولے گئے جعلی اکاؤنٹس کرپشن کے پیسے سے بھرے جاتے تھے؟۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -