نابالغ لڑکی سے مبینہ اغوا کے بعد زیادتی، حاملہ ہوگئی، لیکن پھر عدالت نے کیا حکم دیا؟

نابالغ لڑکی سے مبینہ اغوا کے بعد زیادتی، حاملہ ہوگئی، لیکن پھر عدالت نے کیا ...
نابالغ لڑکی سے مبینہ اغوا کے بعد زیادتی، حاملہ ہوگئی، لیکن پھر عدالت نے کیا حکم دیا؟
سورس: File

  

جے پور (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی ریاست راجستھان میں ایک نابالغ لڑکی کو مبینہ اغوا کے بعد زیادتی کا نشانہ بنادیا گیا جس کے باعث وہ حاملہ ہوگئی۔ عدالت نے پولیس کو نابالغ لڑکی کا اسقاطِ حمل کرانے کا حکم دے دیا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ضلع چورو سے تعلق رکھنے والی 16 سالہ لڑکی کو 3 اپریل کو ریاست ہریانہ کے جاوید نامی ملزم نے بہلا پھسلا کر اغوا کیا ۔ والدین کی جانب سے 8 اپریل کو پولیس کو درخواست دی گئی جس کے بعد لڑکی کی تلاش شروع ہوگئی۔ تقریباً ایک مہینے کی تلاش کے بعد 12 مئی کو لڑکی کو ہریانہ کے علاقے آدم پور منڈی سے بازیاب کروایا گیا۔

پولیس کے مطابق بازیابی کے بعد ٹیسٹ کیا گیا تو لڑکی کورونا سے متاثرہ تھی۔ لڑکی کے ساتھ ایک مہینے تک زیادتی کی گئی جس کے باعث وہ حاملہ ہوگئی۔ کا کورونا کا علاج مکمل ہونے کے بعد متاثرہ لڑکی کو عدالت میں پیش کیا گیا جہاں سے حکم ملا کہ نابالغ لڑکی کا اسقاطِ حمل کرایا جائے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -جرم و انصاف -