حکومت کی پرویز مشرف کو واپس لانے کیلئے سہولت فراہم کرنے کی پیشکش

حکومت کی پرویز مشرف کو واپس لانے کیلئے سہولت فراہم کرنے کی پیشکش

  

     اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)وفاقی حکومت نے سابق صدرپرویز مشرف کو ملک واپس لانے کیلئے سہولت فراہم کرنے کی پیشکش کر دی۔ نجی ٹی وی کے مطابق وفاقی وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ نے کہا حکومت پرویز مشرف کو واپس لانے کیلئے سہولت فراہم کرنا چاہتی ہے، سابق صدر کو سزا ہوئی تھی وہ واپس آئیں، عدالت ان کے معاملے کودیکھے، مشرف کوواپس آنا چاہیے، وہ قانون کا سامنا کریں۔اس دوران صدرسپریم کورٹ باراحسن بھون نے کہا سپریم کورٹ کے جسٹس قاضی فائزعیسیٰ کیخلاف دائرریفرنس واپس لینے کا مطالبہ کرتا ہو ں، آزاد عدلیہ پرلٹکنے والی تلواریں ختم ہونی چاہیں،اس پر وفاقی وزیر قانون نے کہا وزیراعظم شہباز شریف سے جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نظرثانی اپیل کے بارے میں بات کروں گا، کابینہ کے آئندہ اجلاس میں جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نظرثانی اپیل کا معاملہ اٹھاؤں گا، مستقل سیکرٹری قانون کیلئے حکومت سے مطالبہ کروں گا۔جمعرات کو یہاں وفاقی وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ اور صدر سپریم کورٹ بار احسن بھون نے مشترکہ پریس کانفرنس کی۔ احسن بھون نے جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کیخلاف نظرثانی اپیل واپس لینے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے عہدیدار تمام لا سٹوڈنٹس کے مسائل حل کریں گے۔ انہوں نے ڈائریکٹوریٹ کا افتتاح کرنے پر وزیر قانون کا شکریہ ادا کیا،جبکہ وزیر قانون نے پاکستا ن بار کو حکومتی گرانٹ کا چیک بھی دیا۔ وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ نے کہا بار ایسوسی ایشن کا آئینی امور میں بنیادی کردار ہے،ہر جمہوری حکومت کے پیچھے بار ایسوسی ایشنز پشتہ باندھتی ہیں۔ آمریت کے دور میں بھی بار ایسوسی ایشنز کھڑی ہوتی ہیں،مضبوط بار کیلئے مضبوط قانونی تعلیم کا انتظام ہونا شرط ہے، دہائیوں سے انجینئرنگ اور میڈیکل کونسلز مضبوط رہیں۔  2018 میں سپریم کورٹ نے ڈائریکٹوریٹ بنانے کا حکم دیا۔ اعظم تارڑ نے کہا بدقسمتی سے معاملہ آج تک کھٹائی میں پڑا رہا،وزارت قانون عدالتی حکم پر ڈائریکٹوریٹ بنادی گئی ہے، سات رکنی ٹیم نے ڈائریکٹوریٹ کا چارج لے لیا ہے،سارا طریقہ کار ویب سائٹ ہر ڈال دیا جائیگا۔ پاکستان بار کیلئے وزیراعظم نے اپنے صوابدیدی فنڈز سے رقم دی ہے،پاکستا ن بار اور سپریم کورٹ بار کیلئے چار چار کروڑ کی گرانٹ دی جا رہی ہے۔ اس موقع پر صدر سپریم کورٹ بار نے کہا پرویز مشرف کی سزا معطلی کیخلاف اپیل سپریم کورٹ سماعت کیلئے مقر ر کرے،پرویز مشرف کیخلاف قانون کے مطابق کاروائی ہونی چاہیے۔

حکومت پیشکش

مزید :

صفحہ اول -