حملے کی کوئی اطلاع نہیں، عمران خان کو وزیراعظم کی سکیورٹی حاصل، وزیر داخلہ

   حملے کی کوئی اطلاع نہیں، عمران خان کو وزیراعظم کی سکیورٹی حاصل، وزیر ...

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ نے کہا ہے کہ عمران خان پر حملے کی کوئی اطلاع نہیں ہے، بڑے لیڈروں کو حادثہ ہو تو پورے ملک کا نقصان ہوتا ہے، عمران خان کو  وہی سکیورٹی حاصل ہے جو بطور وزیراعظم انہیں حاصل تھی۔رانا ثنا اللہ نے مزید کہا کہ عمران خان سیاستدان نہیں، قوم کو تقسیم کرنا چاہتے ہیں، عمران خان کا 25 مئی کا پروگرام کامیاب ہو جاتا  تو ملک میں قتل و غارت ہوتی، عمران خان کے خلاف مقدمہ بھی چلنا چاہیے اور گرفتار بھی کرنا چاہیے، عمران خان کیخلاف بغاوت کامقدمہ کابینہ کی اجازت کے بغیر درج نہیں ہوسکتا۔ایک انٹرویو میں رانا ثنا اللہ نے کہا کہ تمام اتحادی جماعتوں کامؤقف تھاکہ کالعدم تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) سے بات ہونی چاہیے تاہم ماورائے آئین کسی مطالبے پر بات نہیں ہونی چاہیے، فاٹا کو دوبارہ الگ کرنے اور فوج بلانے پر بات نہیں ہوگی۔ وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ نے کہا ترکی ہمارا بہترین دوست اور برادر اسلامی ملک ہے،ترکی نے پاکستان کی مشکل ترین حالات میں ہمیشہ فراغ دلانہ مدد کی ہے،ترکی اور پاکستان کے درمیان بہترین معاشی، ثفافتی اور کاروباری تعلقات ہیں،وزیر اعظم شہباز شریف اور انکے وفدکے رواں مہینے دورہ ترکی کے دوررس نتائج نکلیں گے۔ جمعرات کو وزیرداخلہ رانا ثنا اللہ اورترکی کے وزیر برائے داخلہ امورسلیمان سوئیلوکے درمیان کانفرنس کال ہوئی جس میں  پاکستان اورترکی کے درمیان تعلقات کے فروغ اور باہمی دلچسپی کے دیگر امورپر بات چیت،پاکستان سے ترکی کیلئے غیر قانونی امیگریشن اورانسانی سمگلنگ روکنے کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزراء میں  اتفاق ہوا کہ غیرقانونی امیگریشن اورانسانی سمگلنگ کو روکنا ہمارا مشترکہ ہدف ہے۔ غیر قانونی امیگریشن اورانسانی سمگلنگ روکنے اوراس میں ملوث عناصر کیخلاف کاروائی پربھی اتفاق کیا گیا  انسانی سمگلنگ کے خاتمے کیلئے ایف آئی اے اور ترک امیگریشن ادارے کے درمیان ہاٹ لائن قائم کرنے کی تجویز پربھی گفتگو ہوئی،ترکی وزیر داخلہ سلیمان سوئیلو نے رانا ثنا اللہ کو وزارت داخلہ کا منصب سنبھالنے پر مبارکباد پیش کی۔ اس موقع پر وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ نے کہا کہ پاکستان مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالی کے حوالے سے ترکی کے دوٹوک موقف کا معترف ہے۔ ترک وزیر داخلہ سلیمان نے کہا صدر طیب اردوان اور وزیراعظم شہباز شریف کی حالیہ دورہ ترکی کے دوران انتہائی مفید ملاقات ہوئی،وزیراعظم پاکستان کے دورہ ترکی سے باہمی تعلقات میں مزیدوسعت اورمضبوطی آئے گی،پاکستان اور ترکی کے درمیان تعلقات باہمی محبت، بھائی چارے اوراعتماد پر قائم ہیں، رانا ثنا اللہ نے ترک وزیر داخلہ سلیمان سوئیلو کو پاکستان دورے کی دعوت دی جو ترک وزیرداخلہ سلیمان نے قبول کرتے ہوئے وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ کا شکریہ ادا کیا۔

وزیر داخلہ

مزید :

صفحہ اول -