اداکارہ میرا اپنی فلم کو سینما گھروں میں جگہ نہ ملنے پر پریس کانفرنس کے دوران آبدیدہ ہو گئیں

اداکارہ میرا اپنی فلم کو سینما گھروں میں جگہ نہ ملنے پر پریس کانفرنس کے ...
اداکارہ میرا اپنی فلم کو سینما گھروں میں جگہ نہ ملنے پر پریس کانفرنس کے دوران آبدیدہ ہو گئیں

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستانی اداکارہ میرا پریس کانفرنس کے دوران اپنی فلم کو بی کلاس قرار دیئے جانے اور سینما گھروں میں فلم کو جگہ نہ ملنے پر آبدیدہ ہوگئیں۔

تفصیلات کے مطابق کراچی پریس کلب میں بات کرتے ہوئے میرا نے کہا کہ پاکستان فلم انڈسٹری کے حوالے سے افسوس کی بات ہے کہ میری ایک فلم "دیوداس " بنی لیکن اسے نمائش کیلئے سینما نہیں دیا گیا۔میرا نے کہا کہ میری فلم "دیوداس"کے پروڈیوسرنے اپنا سارا پیسہ اس فلم کو بنانے میں لگادیا اوراب وہ بیمارہیں لیکن ان کی فلم کو ایک سینما تک نہیں دیا گیا، کہتے ہیں کہ یہ بی کلاس پروڈکشن ہے تومجھے بتایا جائے کہ یہاں پرکون سی اے کلاس پروڈکشن ہورہی ہے۔انہوں نے کہا کہ کراچی میں ایسی بہت سی فلمیں بن رہی ہیں جو کہ دیکھنے کے بھی قابل نہیں لیکن انکو سینما مل رہا ہے اور ڈسٹری بیوٹرز بھی۔انہوں نے مزید بات کرتے ہوئے کہا کہ میرا مقصد ہرگز خبروں میں رہنے کا نہیں ہے لیکن اگر حق کی بات کریں تو میڈیا پر کہا جاتا ہے کہ ہم تنازع پیدا کر رہے ہیں ۔اداکارہ نے سوال اٹھایا کہ اگرہمارے ساتھ کچھ برا ہورہا ہے تو کیا ہم اس کے خلاف آواز بھی نہ اٹھائیں۔

اداکارہ میرا نے حکومت سے امداد کی درخواست کرتے ہوئے کہا کہ میں فلم اکیڈمی بنا کر اپنا ہنر نئے اداکاروں میں منتقل کرنا چاہتی ہوں اور اب وہ کیمرے کے پیچھے رہ کر کام کرنا چاہتی ہیں اور اپنانیا ٹیلنٹ سامنے لانے کی کوشیش کررہی ہیں۔اس کے علاوہ اداکارہ نے بتایا کہ ان کے چھوٹے بھائی سیدحسین عباس بھی فلمی دنیا میں کیریئر بنانے کیلئے پرامید ہیں۔

مزید :

تفریح -