بھارتی سیاستدان کی بیوی نے شوہر سے ناجائز تعلقات کے شبے میں خاتون کو تشدد کا نشانہ بنا ڈالا

بھارتی سیاستدان کی بیوی نے شوہر سے ناجائز تعلقات کے شبے میں خاتون کو تشدد کا ...
بھارتی سیاستدان کی بیوی نے شوہر سے ناجائز تعلقات کے شبے میں خاتون کو تشدد کا نشانہ بنا ڈالا
سورس: Screengrab

  

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں کانگریس سے تعلق رکھنے والے ایک سیاستدان کی بیوی نے اپنے شوہر کے ساتھ ناجائز تعلقات کے شبے میں ایک خاتون کو تشدد کا نشانہ بناڈالا۔ انڈیا ٹوڈے کے مطابق بھرت سنگھ سولنکی نامی یہ سیاستدان کانگریس گجرات کا صدر ہے اوروزیر بھی رہ چکا ہے۔ ایک ویڈیو انٹرنیٹ پر پوسٹ کی گئی ہے جس میں اس کی بیوی ریشما پٹیل کو ایک خاتون کو تشدد کا نشانہ بناتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔

ویڈیو میں ریشما پٹیل کو دیگر لوگوں کے ہمراہ ہوٹل کے ایک کمرے میں داخل ہوتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے جہاں متاثرہ خاتون موجود ہوتی ہے۔ کمرے میں داخل ہوتے ہی ریشما پٹیل اس خاتون کو بہیمانہ طریقے سے تشدد کا نشانہ بنانا شروع کر دیتی ہے اور اسے بالوں سے پکڑ کر کمرے میں گھسیٹتی ہے۔ 

خاتون کے ساتھ ہوٹل روم میں خود بھرت سنگھ سولنکی بھی موجود ہوتا ہے جو اپنی بیوی کو روکنے کی ناکام کوشش کرتا ہے۔ ویڈیو میں ریشما پٹیل کہہ رہی ہوتی ہے کہ ”تم میرے شوہر کے ساتھ بیٹھی ہو، میں تمہیں چھوڑوں گی نہیں۔“ متاثرہ خاتون کیمرے سے اپنا چہرہ چھپانے کی کوشش کرتی ہے جس پر ریشما پٹیل اسے مارتے ہوئے چہرہ کیمرے کے سامنے کرنے کو کہتی ہے۔

رپورٹ کے مطابق تاحال اس واقعے پر بھرت سنگھ سولنکی یا کانگریس گجرات کی طرف سے کوئی ردعمل نہیں دیا گیا۔ تاہم یہ معلوم ہوا ہے کہ بھرت سنگھ سولنکی اور ان کی اہلیہ میں کافی عرصے سے ناچاقی چل رہی ہے اور دونوں ایک دوسرے کے خلاف قانونی جنگ بھی لڑ رہے ہیں۔ ماضی میں دونوں کی طرف سے ایک دوسرے کو پبلک نوٹس بھی جاری کیے جا چکے ہیں۔ ریشما کی طرف سے اپنے شوہر پر تشدد کرکے گھر سے زبردستی نکالنے کا الزام عائد کیا گیا تھا۔ 

مزید :

بین الاقوامی -