خواجہ فرید یونیورسٹی رحیم یار خان کی سینڈیکیٹ کا اجلاس، مسائل پر بحث

خواجہ فرید یونیورسٹی رحیم یار خان کی سینڈیکیٹ کا اجلاس، مسائل پر بحث

رحیم یار خان(بیورورپورٹ)خواجہ فرید یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی رحیم یار خان کے دوسرے سینڈیکیٹ کا اجلاس یونیورسٹی کانفرنس ہال میں ہوا۔وفاقی وزیرتعلیم (بقیہ نمبر17صفحہ12پر )

علی رضا گیلانی نے اجلاس کی صدارت کی جبکہ وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر انجینئر اطہر محبوب نے وائس چےئر پرسن کے فرائض سر انجام دیے۔سینڈیکیٹ کے اس دوسرے اجلاس میں دیگر ممبران میں محمد عمر جعفر (ایم۔پی۔اے)،مہوش سلطانہ پارلیمانی سیکرٹری برائے ہائیر ایجوکیشن ،مس فوزیہ ایوب قریشی ایم۔پی۔اے،انجینئر رحمان مقبول ممبر گورننگ باڈی (پی۔ای۔سی)،محمد اجمل بھٹی ایڈیشنل سیکرٹری پلاننگ (ایچ۔ای۔ڈی)خرم جہانزیب چیف آپریٹنگ آفیسر (پی۔ایچ۔ای۔سی)اور شاہد محمود چیف ایگزیکٹوآفیسر انٹریکٹو گروپ شامل تھے۔جبکہ محمد بلال ارشاد نے سیکرٹری سنڈیکٹ کے فرائض انجام دیے۔اجلاس کا آغاز تلاوت قران مجید سے ہوا۔بعد ازاں وائس چانسلر خواجہ فرید یونیورسٹی نے یونیورسٹی کے آغاز میں پیش آنے والے مسائل اور تا حال ڈویلپمنٹ کے بارے میں سینڈیکٹ کے ممبران کو بریفنگ دی۔سینڈیکٹ کے اجلاس میں جن نکات کا جائزہ لیا گیا ان میں یونیورسٹی میں جاری تعمیری منصوبہ جات ،ٹیچنگ و نان ٹیچنگ سٹاف کی سلیکشن بورڈ کے زریعے بھرتی ،طلباء وطالبات کے لیے کی جانے والی نصابی اور غیر نصابی سرگرمیاں،سیکورٹی انتظامات یونیورسٹی میں پیش کیے جانے والے پروگرامز،خزاں 2017سے مینجمنٹ سائنسز اور کمپیوٹر انجینئرنگ پروگرامز کی سفارشات ،سٹوڈنٹ ایڈمیشن فیس،امتحانات کے قوانین وضوابط،یونیورسٹی بجٹ اورسٹوڈنٹس وٹیچر ز پراگریس رپورٹس کے جدید آن لائن طریقہ کار پر تفصیل کے ساتھ جائزہ لیا گیا۔

مزید : ملتان صفحہ آخر