پاکستان کا قیام معجزہ سے کم نہیں، 23مارچ دشمن کے ناپاک ارادوں کو خاک میں ملانے کے عزم کا دن ہے: رانا محمد اقبال خان

پاکستان کا قیام معجزہ سے کم نہیں، 23مارچ دشمن کے ناپاک ارادوں کو خاک میں ملانے ...

لاہور(جنرل رپورٹر،ایجوکیشن رپورٹر)سپیکر پنجاب اسمبلی رانا محمد اقبال خاں نے کہا ہے اتفاق و اتحاد ہی میں کامیابی کی ضمانت ہے۔میاں نواز شریف کی قیادت میں ترقی کا سفر جاری، منزل قریب اور دہشت گردی پر بہت حد تک قابو پا لیا ہے آج کے طالبعلم میں عوامی خدمت کا جذبہ پیدا کرنیکی ضرورت ہے، ہمارے حوصلے بلند ہیں،23مارچ دشمن کے ناپاک ارادوں کو خاک میں ملانے کے عزم کا دن ہے۔ قائداعظم محمد علی جناح ؒ نے مفکر پاکستا ن ڈاکٹر علا مہ محمد اقبالؒ کی فکر اور سوچ کے مطابق برصغیر کے مسلمانوں کو یکجا کیا۔ وہ گزشتہ روز صوبائی و ضلعی حکومتوں کی جانب سے ایوان اقبال میں منعقدہ یوم پاکستان کی تقریب سے خطاب کررہے تھے ۔ تقریب سے چیف ایڈیٹر روزنامہ پاکستان مجیب الرحمان شامی نے بھی خصوصی خطاب کیا ۔اس موقع پر صوبائی وزراء مجتبیٰ شجاع الرحمان ،ذکیہ شاہنواز ،شیخ علاوالدین ، اراکین قومی و صوبائی اسمبلی، کمشنر لاہور عبداللہ سنبل ،ڈپٹی کمشنر سمیر احمد ، اساتذہ ،طلبہ و تمام مکاتب فکر سے تعلق رکھنے والے لوگ بھی موجود تھے ۔ تقریب میں طلباء نے ملی نغمے بھی پیش کئے ۔اپنے خطاب میں سپیکر پنجاب اسمبلی کا مزید کہنا تھا ہم لازوال قربانیاں پیش اورخون کی ند یاں عبور کر کے بال�آخر خود مختار ریاست پاکستان حاصل کرنے میں کامیاب ہوئے ۔آزادی حاصل کرنے کا سفر کبھی آسان نہیں ہوتا۔ پا کستا ن کا قیام انسانی تاریخ میں معجزے سے کم نہیں ، پاکستان محض ایک جغرافیائی خطہ نہیں بلکہ ایک مشن، نظریہ، جذبہ ، تحریک اور نصب العین ہے ۔23مارچ کا دن اسی ایمانی جذبے کی یاد تازہ کرتا ہے جس کی بدولت برصغیر کے مسلمانوں کیلئے ایک آزاد اور خود مختار ریاست کا حصول ممکن ہوا۔ اس میں شک نہیں ہمیں دہشت گردی و بے روز گاری سمیت بے شمار چیلنجز کا سامنا ہے .مگر ہم عزم و استقلال سے تمام چیلنجز کا مقابلہ کرکے ملک کو مستحکم کر رہے ہیں۔ قائداعظم ؒ کے سنہری اصول ایمان ، اتحاد اور تنظیم پر عمل پیرا ہوئے بغیر مستحکم پاکستان کا خواب شرمندۂ تعبیر نہیں ہو سکتا ۔ پاکستان کی سالمیت کو مقدم رکھنے کیلئے مذہبی وسیاسی جماعتیں باہمی نفرتوں اور کدورتوں کو بالا ئے طاق رکھ کر تعمیر ملک و ملت کیلئے اتحاد و یکجہتی کا مظاہرہ کریں ، پاکستان کو مضبوط کرنے کیلئے عملی اقدامات نہ کئے تو آنیوالی نسلیں ہمیں کبھی معاف نہیں کریں گی ۔ آئین کی بالا دستی و قانون کی حکمرانی قائم کر کے جمہوریت کو مضبوط کیا جا سکتا ہے۔اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے روزنامہ پاکستان کے چیف ایڈیٹر مجیب الرحمان شامی نے کہا پاکستان اسلئے بنا تھا کہ عام آدمی کی آواز با آسانی ایوانوں تک پہنچ سکے مگر آج حکمرانوں تک عام آدمی کی آواز نہیں پہنچ پا رہی ۔لوگ پوچھتے ہیں وہ اپنی آواز ایونوں تک پہنچانے کیلئے کون سے ذرائع استعمال کریں۔حکمرانوں کے اس روئیے سے عام لوگوں میں مایوسی پائی جاتی ہے ۔جب تک مسلم لیگ اور حکومت خود کو لوگوں کے سامنے جوب دہ نہیں ہو گی اسوقت تک جمہوریت اور حکومت مضبوط نہیں ہو سکتی ۔ 23مارچ تمام سیاسی پارٹیوں ، حکمرانوں اور عوام کے درمیان فاصلوں کو دورکرکے آپس میں رابطے مضبوط کرنے کا دن ہے۔ہم سب کو یہ عہد کرنا ہو گا باہمی نفرتوں اور کدورتوں کو بالائے طاق رکھ کر ملک و ملت کی تعمیرکیلئے اتحاد و یکجہتی کا مظاہرہ کرنے کا عملی ثبوت پیش کریں گے ۔ اس بات کو تسلیم کرنا ہو گا چار سال پہلے جب مسلم لیگ ن نے حکومت سنبھالی تو ملک کو ہر طرف دہشت گردی اورتوانائی کے بحرانوں کا سامنا تھا مگر حکومت نے مضبوط حکمت عملی اختیار کر کے دونوں بحرانوں سے قوم کو نجات دلانے کیلئے عملی اقدامات کئے جس کے اچھے نتائج برآمد ہوئے ہیں ۔جب ملک میں امن ہو گا تب ہی ترقی ہو گی ۔حکومتی عملی اقدامات کے پیش نظرکہاجاسکتا ہے پاکستان ایک نئے دور میں داخل ، ملک کا منظر نامہ تبدیل ہو رہا ہے اور قوم کا مستقبل روشن ہے ۔ ضرورت اس امر کی ہے کہ پاکستان کیخلاف منفی پروپیگنڈے کا توڑ کرنے کیلئے عملی اقدامات کئے جائیں تا کہ ملک آگے بڑھ سکے ،انہوں نے کہا کہ مینار پاکستان جس جگہ قرارداد پاکستان منظور ہوئی اس مقام پر وزیر اعلیٰ پنجاب نے عالیشان گریٹر اقبال پارک تعمیر کیا ہے جو انکا شاندار کارنامہ ہے ۔ہم ان سے امید رکھتے ہیں باب پاکستان کے منصوبے کو بھی اسی برق رفتاری سے مکمل کروائیں گے جس طرح انہوں نے گریٹر اقبال پارک اور دیگر ترقیاتی منصوبوں کوپایہ تکمیل تک پہنچایا ہے ۔

مزید : صفحہ آخر