چارسدہ میں کمیسٹوں کی ڈرگ ایکٹ کیخلاف شٹر ڈاؤن ہڑتال

چارسدہ میں کمیسٹوں کی ڈرگ ایکٹ کیخلاف شٹر ڈاؤن ہڑتال

چارسدہ (بیورو رپورٹ ) فارمیسی مالکان کا صوبائی حکومت کے ڈرگ ایکٹ کے خلاف شٹر ڈاؤن ہڑتال اور احتجاجی ریلی ۔ صوبائی حکومت ڈیڑھ لاکھ افراد کو بے روزگار کرکے صوبے میں مزید بے روزگاری لا نا چاہتی ہے ۔ صوبائی ڈرگ ایکٹ کو کسی صورت نہیں مانتے ۔ صوبائی حکومت ڈرگ ایکٹ کے ذریعے کالا قانون نافذ کرنے کی بجائے ڈی ایچ کیو ہسپتال چارسدہ کے ڈاکٹروں کا قبلہ درست کریں جو کمیشن کے ادویات تجویز کرکے غریب عوام کا خون چو س رہے ہیں۔ حکیم اللہ فوجی ۔ تفصیلات کے مطابق صوبائی حکومت کے ڈرگ ایکٹ کے خلاف ضلع بھر میں فارمیسی مالکان نے دوکانوں کو تالے لگا کر مکمل شٹر ڈاؤن ہڑتال کیا اور فاروق اعظم چوک میں احتجاجی ریلی نکالی ۔ اس موقع پر خطاب کر تے ہوئے متحدہ شاپ کیپرز فیڈیشن کے مرکزی صدر حکیم اللہ فوجی ، چےئرمین ڈرگ ایسو سی ایشن حاجی صدیق اللہ ، جنرل سیکرٹری ہدایت اللہ اور حاجی حنیف خان عمر زئی نے کہاکہ ڈرگ رولز میں ترمیم کرکے صوبائی حکومت ڈیڑھ لاکھ افراد کو بے روزگار بنانے کی سازش کر رہی ہے ۔ صوبائی حکومت کے کالے قانون کے خلاف آخری دم تک لڑینگے ۔ انہوں نے کہاکہ صوبائی وزیر صحت اور سیکرٹری قانون 1982ایکٹ میں ترمیم کو واپس لیکر ڈیڑھ لاکھ خاندانوں کو معاشی قتل سے بچائیں۔ انہوں نے صوبائی حکومت سے مطالبہ کیا کہ کالا قانون لاگو کرنے کی بجائے ڈی ایچ کیو ہسپتال چارسدہ کے ڈاکٹروں کا قبلہ درست کیا جائے کیونکہ بیشتر ڈاکٹر دن رات کمیشن کے ادویات تجویز کرکے غریب عوام کا خون چوس رہے ہیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر