کرونا وائرس نے 192ممالک کو جکڑ لیا، سعودی عرب میں رات کا کرفیو ، امریکہ کی 12ریاستوں میں مکمل لاک ڈاؤن، ملک بھر میں نفاذ کیلئے مشاورت

  کرونا وائرس نے 192ممالک کو جکڑ لیا، سعودی عرب میں رات کا کرفیو ، امریکہ کی ...

  



روم، واشنگٹن،ریاض، لندن (مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) کرونا دنیا کے ایک سو بانوے ممالک میں پھیل گیا، دنیا بھر میں مرنیوالوں کی تعداد15 ہزار سے بھی تجاوز کر گئی جبکہ 3 لاکھ 38 ہزار 724 افراد متاثر ہیں۔چین اور اٹلی کے بعد امریکہ کرونا وائرس سے متاثرہ تیسرا بڑا ملک بن گیا۔ اٹلی میں گزشتہ روز602افراد لقمہ اجل بن گئے، مرنیوالوں کی مجمو عی تعداد 6 ہزار78 ہوگئی،جبکہ 60ہزار افراد متاثر ہیں،جن میں 3 ہزار کی حالت تشویشناک ہے۔ امریکہ میں کرونا سے ہلاکتوں کی تعداد 451ہوگئی جبکہ متاثرین کی تعداد 34 ہزار 770ہے۔ نیویارک میں کرونا مریضوں کی تعداد دنیا بھر کے مریضوں کی تعداد کا پانچ فیصد ہوگئی ہے۔ صدر ٹرمپ نے کیلی فورنیا کو انتہائی آفت زدہ قراردیدیا۔ امریکی سینیٹر رینڈ پا ل میں کرونا وائرس کی تشخیص ہوئی ہے۔ سپین میں ایک ہی روز 410، ایران میں 127 افراد موت کے منہ میں چلے گئے۔جرمنی 17، بیلجیئم 13،چین، سوئٹزر لینڈ اور پرتگال میں 9،9، ملائیشیا 4، عراق 3، انڈونیشیا اور بنگلا دیش میں مزید ایک ایک ہلاکت ہوئی،چین میں گزشتہ 5روز میں کرونا کا کوئی مریض سامنے نہیں آیا۔ سپین میں کرونا سے 1772افراد ہلاک ہوگئے۔ ایران میں کرونا سے مرنیوالوں کی تعداد 1685 ہے۔فرانس میں 674افراد، جنو بی کوریا میں 111، برطانیہ میں کرونا سے 281افراد لقمہ اجل بنے۔ جرمنی میں ہلا کتوں کی تعداد 94ہے۔بھارت میں کرونا سے 7افراد ہلاک اور 396افراد متاثرہیں۔۔ادھر یورپی یونین نے وائرس کے پھیلاؤ کے بعد 30 روز کیلئے یونین کے باہر سے تمام مسافروں کیلئے اپنی سرحدیں بند کر دی ہیں۔ ہالینڈ کی حکومت نے سپین سے آنے والی تمام پروازوں پر دو ہفتے کے لیے پابندی لگا دی ہے۔آسٹریا میں مریضوں کی تعداد 3611 ہے اور ایک دن میں 367 مریضوں کا اضافہ ہوا ہے۔ فرانسیسی پارلیمان نے ملک میں دو ماہ کیلئے طبی ایمرجنسی لگانے کی منظوری دیدی۔ برطانوی وزیراعظم نے قوم سے خطاب میں کرونا وباء کی خطرناک صورتحال کے باعث ملک بھر میں تین ہفتوں کیلئے لاک ڈاؤن کا اعلان کردیااور تما م شہریوں کو گھروں میں رہنے کی ہدایت کردی سعودی حکومت نے آج سے ملک بھر میں 21روز کیلئے کرفیو کے نفاذ کا حکم جاری کردیاکو شام 7 بجے تا صبح 6 بجے تک جاری رہے گا۔عرب میڈیا کے مطابق سعودی فرماں روا کی جانب سے کرفیو کا اعلان وزارت صحت کی طرف سے کرونا کے کیسز 500 سے تجاوز کرنے کی اطلاع دینے کے بعد کیا گیا، ملک میں وائرس کے 511 کیسز کی تصدیق کی ہے۔ شہریوں کو اپنی حفاظت کیلئے گھروں میں رہنے کی تاکید کی گئی ہے۔کرفیو کے نفاذ میں سعودی وزارت داخلہ نے سول اور ملٹری حکام کو مکمل تعاون کا حکم دیا ہے۔ سرکاری ملازمین اور اہم شعبوں سے وابستہ افراد کرفیو سے مستثنیٰ ہونگے جبکہ بیکریز، سپر مارکیٹس، گوشت، سبزی اور لیبارٹریز، میڈیکل سٹورز، کلینکس، ہسپتال اور دوا ساز کمپنیاں کرفیو سے مستثنیٰ ہوں گی۔دوسری طرف ا مریکہ میں کرونا وائر س سے صورتحال مزید خرا ب ہوتی جارہی ہے جس کے باعث نیویارک کے میئر نے آئندہ دس روز میں طبی سہولیات کی قلت سے خبردار کردیا۔برطانوی نشریاتی ادارے کے مطابق امریکہ میں اسوقت کرونا وائرس کے کیسز کی تعداد31ہزار سے تجاوز کرگئی ہے جبکہ تقریبا 400 سے زائد افراد وائرس سے ہلاک ہوچکے ہیں۔ نیویارک شہر اس وقت وباء کا مرکز سمجھا جارہا ہے جہاں ملک میں مجموعی کیسز کے نصف کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ نیویارک کے میئر بل ڈی بلیسیو نے کہا اگر ہمیں مزید وینٹی لیٹر نہ ملے تو لوگ مرنا شروع ہوجائیں گے۔ر یاست کے گورنر انڈریو کامو نے بتایا کہ گزشتہ روز تقریبا 15 ہزار شہریوں کے کرونا ٹیسٹ مثبت آئے جو اس سے گزشتہ روز کی نسبت 4 ہزار زیادہ ہے، نیویارک کے میئر نے شہریو ں کو خبردار کرتے ہوئے کہا کہ تمام امریکی شہری حقائق جاننے کے حقدار ہیں، صورتحال بدترین ہورہی ہے جبکہ اپریل اور مئی میں مزید بری صورتحال سے دوچار ہوں گے۔عالمی وبا کرونا وائرس سے فرانس میں ہلاکتوں کی تعداد 674 ہو گئی ہے جبکہ 16018 افراد میں کروناکی تصدیق ہوئی ہے۔ گزشتہ روز وبائی بیماری کرونا سے مرنیوالوں کی تعداد 112 ہو گئی ہے جس کے بعد فرانس پولیس نے لاک ڈاون کو مزید موثر بنانے کیلئے اس کی نگرانی جدید ترین ڈرون ٹیکنالوجی سمیت ہیلی کاپٹر سے شروع کر دی۔امریکہ میں گزشتہ روز تک 13 ہزار 931نئے کیسز آنے سے وہاں مجموعی طورپر 38ہزار 138متاثرہیں جبکہ 708کی حالت نازک ہے جبکہ مہلک بیماری سے 396افراد پہلے ہی دم توڑ چکے ہیں جن میں 94 نئی اموات بھی شامل ہیں۔امریکہ میں اسوقت 12ریاستوں میں لاک ڈان جاری ہے جن میں ریاست واشنگٹن اوہائیوایلی نوائے نیویارک نیوجرسی کیلیفورنیا،نٹیکیڈ یلاورلوزیا نا فلڈ یفیامیزوری اور اوریگون شامل ہیں جبکہ وفاقی حکومت پورے ملک میں مکمل لاک ڈان کیلئے ریاستی حکومتوں سے مشاورت جاری رکھے ہوئے ہے۔ واشنگٹن نے اپنے شہریوں کو بیرون ملک سفر کرنے سے منع کر دیا ہے

کرونا ہلاکتیں

مزید : صفحہ اول