ورلڈکپ 1992؛ انضمام نے سیمی فائنل کی یادیں تازہ کرلیں

ورلڈکپ 1992؛ انضمام نے سیمی فائنل کی یادیں تازہ کرلیں

  



لاہور(یواین پی)انضمام الحق نے ورلڈکپ1992 کے سیمی فائنل کی جذباتی یادیں تازہ کرلیں، سابق کپتان کا کہنا ہے کہ نیوزی لینڈ کیخلاف لیگ میچ میں ناکامی پر ایک ساتھی کھلاڑی نے گالیاں دیں، فیصلہ کن مرحلے میں میچ وننگ اننگز کھیلی، رن آوٹ ہونے پر کپتان عمران خان کی ڈانٹ سے ڈررہا تھا، انہوں نے اچھل کر گلے لگالیا۔تفصیلات کے مطابق اپنے یو ٹیوب چینل پر انضمام الحق نے ورلڈکپ 1992سیمی فائنل کی یادیں تازہ کیں، انھوں نے کہا کہ میں نیوزی لینڈ کیخلاف لیگ میچ میں جب 5 رنز پر آوٹ ہوا تو ایک ساتھی کھلاڑی نے شاور روم میں گالیں دیں اور سفارشی کہا، میری سلیکشن پر بڑی تنقید ہورہی تھی،ہم آسٹریلیا، نیوزی لینڈ کی پچز پر کھیلنے کے عادی بھی نہیں تھے،21 مارچ کو سیمی فائنل تھا،اس دور میں 267کا ہدف آج کے 400رنز حاصل کرنے کے برابر تھا،37 گیندوں پر 60 کی اننگز نے میری دنیا بھر میں پہچان کرا دی او ر آج تک شائقین کو میری وہ یادگار اننگز یاد بھی ہے جس کی بہت زیادہ خوشی ہے۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی