تمام اضلاع میں پبلک ٹرانسپورٹ بند کرنے کا آپشن زیر غور: اجمل خان وزیر

تمام اضلاع میں پبلک ٹرانسپورٹ بند کرنے کا آپشن زیر غور: اجمل خان وزیر

  



پشاور(سٹاف رپورٹر)وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا کے مشیر برائے اطلاعات و تعلقات عامہ اجمل خان وزیر نے کہا ہے کہ گزشتہ دن سے خیبرپختونخوا میں کورونا کا کوئی نیا کیسے نہیں آیا جبکہ حکومت نے صوبے میں شاپنگ مالز مارکیٹس اور ریسٹورنٹس وغیرہ بند کرنے کے احکامات مورخہ 22بروز اتوار سے 29 مارچ تک توسیع دی ہے۔ مشیر اطلاعات نے مزید بتایا کہ اس فیصلے کے تحت فارمیسی، کھاد، پیسٹی سائڈز کریانہ اسٹورز آٹا چکی،تندور کی دکانیں، دودھ شاپس، آٹو ورکشاپس، پٹرول پمپس گوشت اور چکن کی دکانیں، فروٹ اور سبزی شاپس، اور اشیائے خوردونوش کی منڈیوں کے علاوہ باقی مارکیٹس اور دکانیں بند رہے گی۔ اسی طرح ریسٹورنٹس، کیفے ٹیریا اور فاسٹ فوڈز کے تمام سنٹرز بھی 29 مارچ تک مکمل طور پر بند رہیں گے۔ اجمل خان وزیر نے کہا کہ بین الاضلاع ٹرانسپورٹ پہلے سے بند ہے تاہم تمام اضلاع میں پبلک ٹرانسپورٹ بند کرنے کا آپشن بھی زیر غور ہے اور غیر ضروری اشیا بنانے والی فیکٹریاں بھی اتوارکے دن تک بند رہیں گی۔ کمیونٹی کورنٹائن بارے مشیر اطلاعات نے بتایا کہ عوام اپنے گلی محلوں تک محدود رہیں ِ، حکومت کورونا وبا ء کے پھیلاو کو موثر طریقے سے روکنے کیلئے بازاروں اور گلی محلوں میں جراثیم کُش سپرے کر رہی ہے۔انہوں نے مزید بتایا کہ وزیر اعلیٰ محمود خان نے چیف سیکرٹری آئی جی پی و دیگر متعلقہ حکام کے ہمراہ دوران پور پشاور میں زائرین کیلئے قائم کئے گئے قرنطینہ مرکز کا دورہ کیا ہے جہاں فی الوقت ایک سو پچاس افراد کو کورنٹائن کرنے کی گنجائش موجود ہے اور ضرورت پڑنے پر پی جی ایم آئی کے دو دیگر بلاکس کو بھی قرنطینہ قرار دئیے جا سکے ہیں۔مشیر اطلاعات اجمل خان وزیر کے مطابق ڈیرہ غازی خان سے زائرین کی کانوائے کے پی کیلئے صبح آٹھ بجے روانہ ہوچکی ہے۔ چار بسوں پر مشتمل کانوائے کے ذریعے 132 زائرین کو پشاور لایا جارہاہے جن کو پشاور۔اسلام آباد موٹروے انٹر چینج کے قریب دوران پور میں واقع پوسٹ گریجویٹ میڈیکل انسٹیٹیوٹ میں قرنطین کیا جائے گا۔ ان زائرین میں ایک کا تعلق گلگت بلتستان جبکہ دیگر کا تعلق پختونخوا سے ہے۔ اب تک صوبہ میں کورونا وبا ء سے تین اموات واقع ہوچکی ہیں۔کورونا اپڈیٹس بارے مشیر اطلاعات نے بتایا کہ اب تک صوبہ بھر میں کورونا کے 275 مشتبہ کیسز سامنے آچکے ہیں جبکہ ٹوٹل 31 افراد میں کورونا کی تصدیق ہوچکی ہے اور تازہ ترین اطلاعات کے مطابق 85 افراد کے کورونا ٹیسٹ کے نتائج نیگیٹیو آچکے ہیں۔کورونا وبا ء کے سد باب کیلئے اُٹھائے گئے حکومتی اقدامات کی تفصیلات بتاتے ہوئے اجمل وزیر نے بتایا کہ اب تک صوبہ بھر بشمول قبائلی اضلاع کے ہیلتھ پروفیشنلز، سرکاری اداروں اور عوامی انگیجمنٹ سے متعلق پروفیشنلز میں ایک لاکھ اکیس ہزار ڈسپوزیبل فیس ماسک، سترہ ہزار حساس ماسک، چار ہزار سات سو سنیٹائزرز، چھ ہزار سات سو ڈنگریاں و دیگر ضروری سامان مہیا کیا گیا ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔

مزید : صفحہ اول