کورونا وائرس کا مقابلہ، ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے بتائی گئی دوائی کھانے کی کوشش میں آدمی کی موت ہوگئی

کورونا وائرس کا مقابلہ، ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے بتائی گئی دوائی کھانے کی کوشش ...
کورونا وائرس کا مقابلہ، ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے بتائی گئی دوائی کھانے کی کوشش میں آدمی کی موت ہوگئی

  



نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) گزشتہ دنوں امریکی صدر ڈونلڈٹرمپ کی طرف سے بتایا گیا کہ ملیریا کے علاج میں استعمال ہونے والی ’ہائیڈروکسی کلوروکوئین‘ نامی دوا کورونا وائرس کے لیے بہت موثر ثابت ہو رہی ہے۔ تاہم اس دوا سے اپنا علاج کرنے کی کوشش میں امریکہ میں ایک آدمی کی موت واقع ہو گئی ہے۔ میل آن لائن کے مطابق صدر ٹرمپ اور امریکی طبی ماہرین کی طرف سے اس دوا کے متعلق بتائے جانے کے بعد اس 60سالہ شخص اور اس کی اہلیہ نے اس دوا کے ذریعے کورونا وائرس کا علاج کرنے کی کوشش کی۔

تاہم ان لوگوں نے غلطی یہ کر ڈالی کہ ہائیڈروکسی کلوروکوئین کی جگہ ’کلوروکوئین‘ نامی کیمیکل کھا لیا جس سے دونوں کی حالت غیر ہو گئی اور انہیں ہسپتال پہنچایا گیا جہاں اس آدمی کی موت واقع ہو گئی جبکہ اس کی بیوی کی حالت تشویشناک بتائی جا رہی ہے۔ کلوروکوئین وہ کیمیکل ہے جس سے فش ٹینک کی صفائی کی جاتی ہے۔ اس جوڑے نے کلوروکوئین کو ہائیڈروکسی کلوروکوئین سمجھ کر کھا لیا۔ امریکی ریاست ایریزونا کے فلاحی طبی ادارے بینر ہیلتھ کی طرف سے اس افسوسناک واقعے کی خبر دی گئی ہے۔ اس جوڑے کو اسی ادارے کے زیرانتظام ایک ہسپتال میں لایا گیا تھا۔ واضح رہے کہ صدر ٹرمپ نے گزشتہ ہفتے ہائیڈروکسی کلوروکوئین کو ’گیم چینجر‘ دوا قرار دیتے ہوئے کہا تھا کہ یہ دوا کورونا وائرس کے لیے بہت مو¿ثر ثابت ہو رہی ہے جس سے اس جوڑے کو یہ دوا کھانے کی ترغیب ملی۔

مزید : بین الاقوامی