’ہم سے 5 روپے کے حساب سے لاکھوں ماسکوں کا آرڈر لے کر غائب ہوگئے‘ وہ پاکستانی جو پاک فوج کے ساتھ ہاتھ کرنے سے بھی باز نہیں آئے

’ہم سے 5 روپے کے حساب سے لاکھوں ماسکوں کا آرڈر لے کر غائب ہوگئے‘ وہ پاکستانی ...
’ہم سے 5 روپے کے حساب سے لاکھوں ماسکوں کا آرڈر لے کر غائب ہوگئے‘ وہ پاکستانی جو پاک فوج کے ساتھ ہاتھ کرنے سے بھی باز نہیں آئے

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) چیئرمین این ڈی ایم اے لیفٹیننٹ جنرل محمد افضل نے بتایا ہے کہ بہت سے لوگ ہم سے 5 روپے کے حساب سے ماسک کا آرڈر لے گئے لیکن جب مارکیٹ میں ماسک مہنگے ہوئے تو وہ غائب ہوگئے۔

وزیر اعظم کے ہمراہ سینئر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے لیفٹیننٹ جنرل محمد افضل نے بتایا کہ جب کورونا وائرس شروع ہوا تو بہت سے لوگ ہمارے پاس آئے اور کہا کہ 5 روپے کے حساب سے اتنے لاکھ ماسک دے دیں گے ، وہ مجھ سے کوٹیشن لے کر گئے اور پھر غائب ہوگئے، ان لوگوں سے میڈیا درخواست کرے کہ مال باہر لے آئیں ، یہ کرائسز ختم ہوگیا تو مال بھی بک جائے گا، یہ ہمارے لوگ ہیں ان کی زندگیاں زیادہ عزیز ہیں ، پیسہ تو بعد میں بھی آجائے گا۔

لیفٹیننٹ جنرل محمد افضل نے بتایا کہ اس وقت فیصل آباد میں ایک فیکٹری صرف 2500 ماسک بناسکتی ہے، لاہور میں ایک آدمی 10 ہزار ماسک بناسکتا ہے، واہ کینٹ میں 25 ہزار ماسک بننا شروع ہوگئے ہیں، جتنی ماسک بنانے والی فیکٹریاں ہیں انہیں کہا ہے کہ مشینیں لے کر آئیں ، انہیں ون ونڈو آپریشن کے تحت میں خود مال کلیئر کرادوں گا۔

مزید : قومی /کورونا وائرس